Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

درود شریف۔۱

درود شریف۔ فضائل، خواص، مسائل، مواقع،آداب

از: حکیم الامت حضرت مولانا اشرف علی تھانوی رحمۃ اللہ علیہ

(شمارہ 677)

نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم پردرود و سلام بھیجنا اللہ تعالیٰ کا تاکیدی حکم ہے… درود و سلام ایک مقبول عبادت ہے… درود وسلام ’’اظہارِ عشق ومحبت‘‘ ہے… درود و سلام ’’وفا‘‘ کا مظہر ہے… درود وسلام مغفرت اور رَفع درجات کا سبب ہے… درود و سلام نُزول رحمتِ خداوندی کا باعث ہے… درود و سلام آ قائے دوجہاں صلی اللہ علیہ وسلم کے قرب وتوجہ کے حصول کا ذریعہ ہے… اسی لئے ہر زمانے میں ’’اہل ایمان‘‘نے درود و سلام سے خوب جھولیاں بھریں… اور اہل علم نے دل کھول کر اس کو موضوع بنایا… اسی’’ بَحر رحمت‘‘ سے قارئین کرام کو روشناس کرانے کیلئے… حکیم الامت حضرت مولانا اشرف علی تھانوی رحمۃ اللہ کی کتاب ’’زادُ السعید‘‘ کے چند صفحات پیشِ خدمت ہیں۔

فضائل درود شریف

(۱)… سب سے بڑھ کر فضیلت اس کی یہ ہے کہ اللہ تعالیٰ نے خود صلٰوۃ کی نسبت اپنی اور اپنے ملا ئکہ کی طرف فرمائی، چنانچہ ارشاد فرمایا:

اِنَّ اللّٰہَ وَمَلٰٓئِکَتَہٗ یُصَلُّوْنَ عَلَی النَّبِیِّ

’’تحقیق اللہ تعالیٰ اور اس کے فرشتے درود بھیجتے ہیں نبی صلی اللہ علیہ وسلم پر۔‘‘

(احزاب)

(۲)… حدیث شریف میں ارشاد فرمایا:

’’رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے کہ جمعہ کے روز جو شخص مجھ پر درود بھیجتا وہ مجھ پر پیش کیا جاتا ہے۔‘‘

(مستدرک للحاکم)

(۳)… اور ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’جب کوئی شخص مجھ پر سلام بھیجتا ہے، اللہ تعالیٰ میری روح مجھ پر واپس کر دیتے ہیں یہاں تک کہ میں اس کے سلام کا جواب دے لیتا ہوں۔‘‘

(ابودا ؤد)

(۴)… اور ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

سب سے زیادہ قیامت کے روز میرے ساتھ اس کو قرب ہوگا جو مجھ پرکثرت سے درود پڑھتا ہوگا۔

(جامع الترمذی)

(۵)… اور ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’اللہ تعالیٰ کے مقرر کیے ہوئے بہت سے فرشتے اسی کام کے ہیں کہ سیّاحی کرتے رہتے ہیں، اور جو شخص میری امت میں ( مجھ پر) سلام بھیجتا ہے اس کو میرے پاس پہنچاتے ہیں۔‘‘

(مستدرک للحاکم)

(۶)… اور ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’کہ میں حضرت جبر ئیل علیہ السلام سے ملا، انہوں نے مجھ کو خوشخبری سنائی کہ پروردِگار عالَم فرماتے ہیں کہ جو شخص آپ پر درود بھیجے گا میں اس پر رحمت بھیجوں گا، اور جو شخص آپ پر سلام پڑھے گا میں اس پر سلامتی ناز ل کروں گا… میں نے یہ سن کر سجدۂ شکر ادا کیا۔‘‘

(مستدرک للحاکم)

(۷)…حضرت ابی بن کعب رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ میں نے عرض کیا:

یارسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم! میں آپ پر صلٰوۃ کی کثرت کیا کرتا ہوں توکس قدر صلٰوۃ اپنا معمول رکھوں؟

آپ نے ارشاد فرمایا: 

’’جس قدر تمہارا دل چاہے۔‘‘

میں نے کہا ایک ربع؟(یعنی تین ربع اور وظائف رہیں)۔

آپ نے ارشاد فرمایا:

’’جس قدر تمہارا دل چاہے، اور بڑھا دو توتمہارے لیے زیادہ بہتر ہے۔‘‘

میں نے عرض کیا:’’ نصف؟‘‘

آپ نے ارشاد فرمایا:

’’جس قدر چاہو، اور اگر زیادہ کر دو تو بہتر ہے۔‘‘

تو میں نے کہا: ’’تو پھر سب درود ہی درود رکھوں گا۔‘‘

آپ نے ارشاد فرمایا:

’’تو اب تمہاری سب فکروں کی بھی کفایت ہو جاوے گی، اور تمہارے گناہ بھی معاف ہو جائیں گے۔‘‘

(مستدرک للحاکم)

(۸)… اور ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’جو شخص مجھ پر ایک بار درود پڑھے گا اللہ تعالیٰ اس پر دس رحمتیں نازل فرماویں، اور اس کے دس گناہ معاف ہوں، اور اس کے دس درجے بڑھیں، اور دس نیکیاں اس کے نامۂ اعمال میں لکھی جاویں۔‘‘

(سنن النسائی)

(۹)…ایک اور روایت میں ہے کہ درود پڑھنے والے پر اللہ تعالیٰ ستر رحمتیں نازل فرماتے ہیں، اور ملا ئکہ اس کے لیے ستر بار دعا کرتے ہیں۔

(۱۰)… کعب الاحبار رحمۃ اللہ علیہ سے روایت ہے کہ للہ تعالیٰ نے حضرت موسیٰ علیہ السلام کو وحی فرمائی کہ تم چا ہتے ہو کہ قیامت کے دن تم کوپیاس نہ لگے؟

عرض کیا: ہاں!

ارشاد ہوا کہ محمد صلی اللہ علیہ وسلم پر درود کی کثرت کیا کرو… روایت کیا اس کو اصبہانی نے۔

(حاشیۃ الحزب)

(۱۱)… حضرت انس رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’جو شخص مجھ پردرودکی کثرت کرے گا وہ عرش کے سایہ میں ہوگا…‘‘ روایت کیا اس کو دیلمی نے۔

(حاشیۃ الحزب)

(۱۲)… اور ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’جو شخص مجھ پر میری قبر کے پاس درود شریف پڑھتا ہے اس کو میں خود سنتا ہوں، اور جو مجھ سے فاصلے پردرود پڑھتا ہے وہ مجھ کو پہنچا دیا جاتا ہے۔‘‘ (یعنی بذریعہ ملا ئکہ کے)۔

روایت کیا ا س کو بیہقی نے’’شعب الایمان‘‘میں۔

(۱۳)…’’در مختار‘‘ میں اصبہانی سے نقل کیا ہے کہ ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’جو شخص مجھ پر درود پڑھے اور وہ قبول ہو جاوے، تو اسی کے گناہ اس کے محو (معاف) ہو جاتے ہیں۔‘‘

(۱۴)… ’’شفا‘‘ میں ہے ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ و سلم نے: 

’’جو مسلمان مجھ پردرود بھیجتا ہے فرشتہ اس درود کو لے کر مجھ تک پہنچاتا ہے اور نام لے کر کہتا ہے کہ فلاں ایسا ایسا کہتا ہے(یعنی اس طرح درود بھیجتا ہے)۔‘‘

(۱۵) …ابو یعلیٰ نے روایت کیا ہے کہ ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’کہ کثرت کرو مجھ پردرود بھیجنے کی، تحقیق وہ پاکیزگی ہے واسطے تمہارے۔‘‘ یعنی بسببِ درودکے گناہوں سے پاکی اور ہرطرح کی ظاہری و باطنی، جانی و مالی پاکیزگی حاصل ہوتی ہے۔

(۱۶)… امام احمد اور ابن ماجہ نے روایت کیا ہے کہ ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’جو آدمی مجھ پردرود بھیجتا ہے فرشتے اس پردرود بھیجتے ہیں… (یعنی اس کے لیے دعائے رحمت کرتے ہیں) جب تک وہ مجھ پر درود بھیجتا رہتا ہے… اب اختیار ہے، خواہ کم درود بھیجو مجھ پر یا زیادہ… مقصود یہ ہے کے درود بکثرت پڑھنا چاہیے۔

(۱۷)… طبرانی نے’’اوسط‘‘ میں روا ایت کیا ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا:

’’جو شخص درود بھیجے مجھ پرکسی کتاب میں،ہمیشہ فرشتے اس پردرود بھیجتے رہیںگے جب تک میرا نام اس کتاب میں رہے گا۔‘‘

(۱۸)… امام مستغفری رحمۃ اللہ علیہ نے روایت کیا کہ ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’جوکوئی ہر روزسو بار درود پڑھے، اس کی سو حاجتیں پوری کی جاویںگی، تیس دنیا کی باقی آخرت کی۔‘‘

 (۱۹)… طبرانی نے روایت کیا ہے کہ ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’جو شخص صبح کو مجھ پردس بار درود بھیجے اورشام کو دس بار، قیامت کے روز اس کے لیے میری شفاعت ہو گی۔‘‘

(۲۰)… ابو حفص ابن شاہین رحمۃ اللہ علیہ نے حضرت انس رضی اللہ عنہ سے روایت کیا ہے کہ ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’جو شخص مجھ پر ہزار مرتبہ درود پڑھے گا، نہ مرے گا جب تک اپنی جگہ جنت میں نہ دیکھ لے۔‘‘

(سعایۃ)

(۲۱)… دیلمی رحمۃ اللہ علیہ نے حضرت انس رضی اللہ عنہ سے روایت کیا ہے کہ ارشاد فرمایا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے:

’’قیامت کے ہول اور خطرات سے وہ شخص زیادہ نجات پاوے گا جو دنیا میں مجھ پردرود زیادہ بھیجتا ہوگا۔‘‘

(سعایۃ)

خواص

(۱)… حضرت علی مرتضی کرم اللہ وجہہ فرماتے ہیں کہ تمام دعائیں رکی رہتی ہیں جب تک محمد رسول اللہ اور آپﷺ کی آل پر درود نہ پڑھو۔

(معجم اوسط للطبرانی)

(۲)… حضرت عمر فاروق رضی اللہ عنہ فرماتے ہیں کہ دعا آسمان و زمین کے درمیان معلق ہے، اوپر نہیں جاتی جب تک اپنے نبی پر درود نہ پڑھو۔

(جامع ترمزی)

(۳) … حضرت ابو رافع رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ جس کا کان بولنے لگے وہ نبیﷺکو یاد کرر اور آپ پر درود پڑھے اور یوں کہے کہ جس نے مجھے یاد کیا ہو اللہ تعالی اس کو خیر و رحمت سے یاد فرماویں۔

 ( عمل الیوم و اللیلتہ لابن السنی)

(۴)… حضرت ابو سعید رضی اللہ عنہ سے روایت ہے: جس شخص کو منظور ہو کہ میرا مال بڑھ جاوے وہ یوں کہا کرے:

{اَللّٰھُمَّ صَلّ ِعَلیٰ مُحَمَّدٍ عَبْدِکَ وَ رَسُوْلِکَ وَعَلی الْمُوُْمِنِیْنَ وَالْمُوْمِنَاتِ وَعَلَی الْمُسْلِمِیْنَ وَالْمُسْلِمَاتِ۔}

(۵) … حضرت ابن عباس رضی اللہ عنہ کے پاس ایک شخص بیٹھا تھا اس کا پاؤں سو گیا، آپ نے فرمایا: جو شخص تجھ کو سب سے زیادہ محبوب ہو اس کا نام لے۔ اس نے کہا: صَلَّی اللّٰہُ عَلَیْہِ وَسَلَّم، اسی وقت سن اتر گئی۔

( عمل الیوم و اللیلتہ لا بن السنّی)

(۶) … ایک بار حضرت عبداللہ بن عمر رضی اللہ عنہما کا پاؤں سو گیا آپ نے یہی عمل کیا، اسی وقت سُن اتر گئی۔

( حاشیئہ حصین ازمائتہ الفوائد)

(۷) … حدیثوں میں نمازِ حاجت حوائج پوری ہونے کی لیے آئی ہے، اُس میں بعد نماز کے درود شریف پڑھا جاتا ہے، تو درود شریف کو کامیابی حوائج میں دخل ٹھرا۔

(۸) … حفطِ قرآن مجید کی دعا حدیث شریف میں آئی ہے، اُس دعا کے ساتھ بھی درود شریف پڑھا جاتا ہے۔ پس درود شریف کو حفظ قرآن میں بھی دخل ہو۔

(جامع ترمذی)

(۹) … ابو موسی مدینی نے بسند ضعیف روایت کیا ہے کہ اسکی بدولت کہ ارشاد فرمایا رسول اللہ ﷺنے: جب تم کسی چیز کو بھول جاؤ، تو مجھ پر درود بھیجو وہ چیز یاد آجائے گی، ان شاء اللہ تعالیٰ!

 (فض)

٭…٭…٭

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor