Bismillah

660

۱۰تا۱۶محرم الحرام۱۴۴۰ھ  بمطابق    ۲۱تا۲۷ستمبر۲۰۱۸ء

عنقریب بھارتی کیمپوں اورایوانوںمیںاذان کی آواز گونجے گی، مفتی عبدالرؤف اصغر

(شمارہ 619)

عنقریب بھارتی کیمپوں اورایوانوںمیںاذان کی آواز گونجے گی، مفتی عبدالرؤف اصغر

غزہ ہند میں شرکت کرنیوالے نبیؐ کی پیش گوئی کے مطابق جہاد پرعمل پیرا ہیں،مولانا مقصود، مختلف زبانوں میں جہاد پر فصیح و بلیغ مواد کا ذخیرہ امیرالمجاہدین کا کارنامہ ہے، مولاناعبدالمالک طاہر
مفتی عبدالرؤف صاحب کا کار ریلی کے ساتھ شاندار استقبال،پروگرام میں 2 ہزار کی قریب شرکا کی شرکت،قاری آصف رشید نے نظم کے ذریعے شرکاء کے جذبات کو گرمایا

اوکاڑہ(القلم نیوز) ضلع اوکاڑہ موضع فتوآنہ میں غزوہ ہند کانفرنس کا شاندار انعقاد کیا گیا، کانفرنس میں2 ہزار کے قریب شرکاء نے شرکت کی۔اس موقع پرخطاب کرتے ہوئے مفتی عبدالرؤف اصغر صاحب نے شہداء کے فضائل پر بہت زبردست اور مدلل خطاب فرمایا ساجد شہید کے والدین کو مبارکباد پیش کی۔ انہوں نے مزید فرمایا کہ  فرمایا کہ  عنقریب بھارتی کیمپوں اور ایوان میں اذان کی آواز گونجے گی۔تلاوت کی سعادت قاری عرفان صاحب نے حاصل کی۔ قبل ازیں مولانا مقصود صاحب نے اپنے بیان میں غزوہ ہند پر مدلل بیان فرمایا۔ انہوں نے فرمایا کہ غزوہ ہند کی پیشین گوئی اس وقت فرمائی جب اس کے بارے میں کوئی سوچ    بھی نہیں سکتا تھا اور اب اس دور میں اس غزوہ میں شرکت کرنے والے دراصل نبی علیہ السلام کی پیشین گوئی کے مطابق میدان جھاد میں عمل پیرا ہیں۔ظہر کے بعد دوسری نشست میں حضرت مولانا عبدالمالک طاہر صاحب نے اپنے بیان میں فرمایا کہ حضرت امیر محترم کی جہادی میدان میں بیشمار خدمات ہیں۔ جہاں میدان جھاد کی تاریخ مرتب ہو رہی ہے، وہیں پر لائبریری اور کتب خانوں میں جہادی دلائل کے انبار لگا دیے ہیں۔ صرف پاکستان میں اردو ہی نہیں بلکہ دنیا پھر میں مختلف زبانوں میں جھاد پر فصیح و بلیغ مواد کا ذخیرہ حضرت امیر محترم کا کارنامہ ہے، جو شخص جس انداز میں بھی جہاد فی سبیل اللہ پر اعتراض کرے اس کا جواب امیر محترم کی تحریر اور تقریر سے مل جائے گا۔اسی لئے ہم امیر محترم کو مجدد جھاد کہتے ہیں۔ اللہ تعالی ان کا سایہ ہمارے سروں پر تادیر قائم رکھے اور حضرت کی عمر، علم اور عمل میں برکت عطا فرمائیں۔ان کے بعد ملک کے مشہور و معروف نعت خواں قاری آصف رشیدی صاحب نے حمد و نعت  کے علاوہ ’’اللہ بہت بڑا ہے، مایوس کیوں کھڑا ہے‘‘ اور ’’اللہ کے راستے میں ہم جان لٹا دیں گے‘‘ پیش فرمائیں۔آخر میں حضرت اقدس مفتی عبدالرؤف صاحب نے شہدا کے فضائل پر بہت ہی زبردست خطاب فرمایا ۔مفتی صاحب نے اپنے بیان میں فرمایا کہ ساجد شہیدؒ حضرت معاذ اور معوذ رضی اللہ عنھما کے بدر والے مقابلے کی طرح اپنے سے زیادہ طاقتور ساتھیوں سے مقابلہ کرکے اور ضد کرکے محاذ پر گیا تھا۔مفتی صاحب نے مزید فرمایا کہ یارو! ساجد تو ہمارا پیر تھا اور ہم تو ان سے دعائیں کرواتے تھے ۔ مودی نے کہا تھا کہ ہندوستان کی مساجد میں اذان بند کروا دونگا۔ ہمارے ساجد نے سری نگر میں جہاں تمہاری تمام فوجوں کے کیمپ موجود ہیں اور ائیرپورٹ تک موجود ہے وہاں اذان دی ہے اور عنقریب یہ اذانیں تمہارے دیگر کیمپوں میں بھی گونجیں گی اور ان شاء اللہ تمہارے ایوانوں میں بھی گونجیں گی ۔انہو ں نے بھارتی حکمرانوں کو مخاطب کرتے  ہوئے  فرمایا کہ تم نے سمجھا تھا کہ ہمارے حکمرانوں سے یاریاں لگا کر اور کاروبار میں شراکت دار بنا کر جھاد کو ختم کر دو گے تو یہ نہیں ہوسکتا کیونکہ اس امت میں ابھی تک ساجد شہید اور طلحہ شہید جیسے نوجوان موجود ہیں جو آج کے اس گندے دور میں اپنے آپ کو دین کیلئے پیش کر دیتے ہیں کہ جس دور میں نوجوانوں کو انٹرنیٹ اور موبائل سے فرصت نہیں ہے۔ مفتی صاحب نے نوجوانوں کو مخاطب کرکے فرمایا! میں تم سے گزارش کرتا ہوں کہ چھوڑو اس گندی زندگی اور آؤ ساجد شھید کے نقش قدم پر چلتے ہیں۔حضرت نے لوگوں سے بارہ سو مرتبہ روزانہ کلمہ طیبہ کا ورد، پانچ وقت کی نماز پابندی کے ساتھ پڑھنے کا وعدہ لیا اور فرمایا کہ جتنے گناہ ہوگئے آج سب پکی توبہ کریں اور ہمیشہ جھاد فی سبیل اللہ کے ساتھ جڑے رہیں۔حضرت مفتی صاحب کے بیان کے دوران اکثر لوگ والہانہ بیان سن کر روتے رہے۔حضرت مفتی صاحب کی دعا کے ساتھ پروگرام اختتام پذیر ہوا۔

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

  • القلم کے گذشتہ شمارے و مضامین
  • کارٹون
TAKWIR Web Designing (www.takwir.com) Copyrights Alqalam Weekly Online