نکیال سیکٹر پر بلا اشتعال بھارتی فائرنگ سے 2 لڑکیوں سمیت 9 زخمی

(شمارہ 636)

نکیال سیکٹر پر بلا اشتعال بھارتی فائرنگ سے 2 لڑکیوں سمیت 9 زخمی

پالانی گاؤں میں کئی گھروں پر مارٹر گولے برسائے گئے،بالاکوٹ،مرگ اور دھاروتی ناری، نار دبسی میں آبادی کو نشانہ بنایا گیا

نکیال (نیٹ نیوز ) بھارتی فورسز نے ایک بار پھر سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے آزاد جموں و کشمیر کے علاقے نکیال سیکٹر میں بلا اشتعال فائرنگ کی جس کے نتیجے میں 2لڑکیوں سمیت 9افراد زخمی ہوگئے ،نکیال کے اسسٹنٹ کمشنر ولید انوار نے بتایا کہ بھارتی فوج نے لائن آف کنٹرول کے قریب تقریباً تمام گاؤں میں شہریوں کو نشانہ بناتے ہوئے بھاری تعداد میں مارٹر گولے برسائے۔بھارت کی جانب سے فائر کیا جانے والا ایک شیل پالانی گاؤں میں حاجی اسلم کے گھر کی چھت پر گرا جس کے نتیجے میں ان کی دو بیٹیاں زخمی ہوئیں جن کی شناخت 22 سالہ مسرت اور 15 سالہ ثمرہ کے نام سے کی گئی۔جیر مرگ اور دھاروتی ناری  گاؤں میں بھی بھارتی گولوں سے 11 سالہ علیبہ مجید اور 35 سالہ محمد زہور مغل زخمی ہوئے۔انہوں نے بتایا کہ بالا کوٹ کے علاقے میں 3 افراد زخمی ہوئے جن میں 18 سالہ عبدالعزیز، 52 سالہ عبدالغنی اور ان کی 42 سالہ اہلیہ فرزند بیگم شامل ہیں۔اس کے علاوہ نار دبسی گاؤں میں 50 سالہ شمیم اختر بھی زخمی ہوئے ،اسسٹنٹ کمشنر کے مطابق 6 زخمیوں کو ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹرز ہسپتال کوٹلی منتقل کردیا گیا ہے ۔