Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

ستم کا ردِّ عمل (نظم ۔ پروفیسر انور جمیل)

ستم کا ردِّ عمل

ستم کا ردِّ عمل اِنتقام ہوتا ہے

ہر اِک کو نظر حقارت سے دیکھنے والو!

ہر اِک کا اپنا بھی کوئی مقام ہوتا ہے

جو ہو سکے تو کسی مضطرب کے کام آؤ

کہ محسنوں کا بہت اِحترام ہوتا ہے

وصول ہوتا ہے جو بھی سوال کے بدلے

جفا کشوں پہ وہ لقمہ حرام ہوتا ہے

ستم گری کا عقیدہ ہے تو ذہن میں رہے

رقیبِ حق کا بھی خفیہ نظام ہوتا ہے

ستمگروں سے کوئی اتنا جا کے بھی کہہ دے

ستم کا ردّ عمل اِنتقام ہوتا ہے

ہر اک آواز ، ہر آہٹ ، ہر ایک جھونکے میں

صدائے کُن کا ہی کوئی پیام ہوتا ہے

چمن کو گرچہ خزاں نے بھی خوں دیا لیکن

گلوں کے لب پہ بہاروں کا نام ہوتا ہے

اَنا کے چاکِ گریباں پہ یہ کھلا انورؔ

کسی سے کام نہ ہونا بھی کام ہوتا ہے

٭…٭…٭

(پروفیسر انور جمیل)

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor