Bismillah

689

۶تا۱۲شعبان المعظم۱۴۴۰ھ  بمطابق ۱۲تا۱۸۱اپریل۲۰۱۹ء

افادات اکابر۔ 677

 افادات اکابر

(شمارہ 677)

غریب کے معنی

صحیح مسلم شریف کی ایک صحیح حدیث ہے کہ اسلام کا ابتدائی دور غربت کا تھا اور آخری دور بھی غربت کا ہوگا۔ جو لوگ اسلام کی غربت کے باوجود اسلام پر قائم رہیں گے وہ خوش قسمت ہیں۔

عربی زبان میں غریب کے معنی مسافر کے ہیں، جس کا کوئی پرسانِ حال نہ ہو، کوئی اجنبی مسافر جب کسی ملک میں جاتا ہے تو لوگ اس کو تعجب سے دیکھتے ہیں، نہ اس کا کوئی ہمدرد ہوتا ہے، نہ غمگسار، نہ کوئی پرسانِ حال، تاریخ اسلام میں ابتدائی دور کے حالات و واقعات تو پڑھے ہوں گے، حضرت بلال، حضرت عمار بن یاسر، حضرت سمیہ، حضرت ابو فکیہہ، حضرت خباب بن الارت وغیرہ وغیرہ رضی اللہ عنہم کی درد ناک داستانیں تو زبانِ زوخلائق ہیں، آپ نے سبھی سُنی یا پڑھی ہوں گی۔ یہ ہے غریب الدیار اسلام کا دورِِ غربت اگر غور فرمائیں تو زیادہ تر عقیدے کا دور تھا، تمدن ومعیشت کا نہ تھا، پوشاک وخوراک کا نہ تھا، رنگ وصورت کا نہ تھا، صرف ایک عقیدۂ توحید کا دور تھا اور اسی کی دعوت پر کہا جاتا تھا۔

بہت سے خدائوں کو ایک خدا بنادیا؟ یہ تو بڑی عجیب بات ہے۔

(بصائروعبر ج۱ص۴۶۴)

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

  • القلم کے گذشتہ شمارے و مضامین
  • کارٹون
TAKWIR Web Designing (www.takwir.com) Copyrights Alqalam Weekly Online