Bismillah

660

۱۰تا۱۶محرم الحرام۱۴۴۰ھ  بمطابق    ۲۱تا۲۷ستمبر۲۰۱۸ء

گوشۂ مکتوب خادم۔ 651

gosha e maktoob e khadim

گوشۂ مکتوب خادم

(شمارہ 651)

مکتوبِ خادم    (5.7.2108)

السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ..

اللہ تعالیٰ ہمیں"مساجد"تعمیر کرنے والا ،آباد کرنے والا،"مساجد"کی حفاظت کرنے والا اور "مساجد"سے محبت کرنے والا بنائے..جہاد کا ایک اہم مقصد"مساجد"کی آبادی،تعمیر اور حفاظت ہے..گزشتہ سال کئی اہل ایمان نے مساجد کے لئے پلاٹ دینے کی پیشکش کی..چونکہ گیارہ مساجد کی تعمیر کا کام جاری تھا اور مزید مساجد کے لئے "فنڈ" موجود نہیں تھا تو ان سے عرض کی گئی کہ..کچھ عرصہ بعد نئی ترتیب شروع ہوگی تب اپنے پلاٹ دیں..زیادہ امانتوں کا بوجھ گردن پر لادنا اچھا نہیں ہوتا..اب الحمدللہ مزید بیس مساجد اس سال بنانے کا ارادہ ہوا ہے..جو"اہل ایمان"مساجد کے لئے پلاٹ دینا چاہیں وہ جماعت کے مقامی ذمہ داروں سے رابطہ فرما لیں..مقامی ذمہ دارصوبائی منتظمین تک اور صوبائی منتظمین"مکتب الامیر"تک یہ درخواستیں پہنچائیں .. اس کے بعد"شعبہ مساجد"ان پلاٹوں کا جائزہ لے گا..تب مناسب پلاٹ قبول کر لئے جائیں گے..عاجزانہ گذارش ہے کہ حلال مال سے پلاٹ دیں..قبضہ والی جگہ یا جھگڑے والی جگہ نہ دیں..اللہ تعالیٰ کے گھروں کی تعمیر میں بہت احتیاط لازم ہے .. آباد مقامات پر پلاٹ دیں..اور پلاٹ دے کر مسجد کی تعمیر(جب جماعت کے پاس استطاعت ہو)کے علاوہ کوئی شرط نہ رکھیں ..پلاٹ طے ہو جانے کے بعد..مساجد کے لئے مخصوص "فنڈ" کی مہم چلائی جائے گی ان شاء اللہ..مغرب سے جمعہ شریف مقابلہ حسن مرحبا!

والسلام

مکتوبِ خادم    (6.7.2018)

السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ..

اللہ تعالیٰ کے "گھروں"کو "مساجد" کہتے ہیں..کسی مسلمان کو "مسجد"سے محبت ہو تو وہ اللہ تعالیٰ کا شکر ادا کرے..یہ ایمان کی علامت ہے..اور جسے"بازار"سے محبت ہو وہ اللہ تعالیٰ سے ڈرے اور استغفار کرے..الحمدللہ اب تک اکیانوے(91)مساجد تعمیر کرنے اور آباد کرنے کی سعادت جماعت کو نصیب ہوچکی ہے..اس سال بیس مساجد کا ارادہ ہے ان شاء اللہ..یوں ہم اپنے ہدف کا ایک تہائی..حاصل کرلیں گے ان شاء اللہ..یہ سب اللہ تعالیٰ کا فضل اور احسان ہے..مسجد کے لئے پلاٹ دینا اتنی بڑی نیکی اور سعادت ہے کہ..دل اس کو حاصل کرنے کے لئے باقاعدہ تڑپتا ہے..ہماری زمین پر محبوب مالک کا گھر بنے سبحان اللہ..پھر یہ زمین دنیا سے اُٹھا کر"جنت"میں لے جائی جائے سبحان اللہ..پھر اس کے بدلے اللہ تعالیٰ ہمارے لئے جنت میں گھر بنائے..ہم تو اللہ کا گھر اپنی کمزور حیثیت کے مطابق بناتے ہیں مگر اللہ تعالی ہمارے لئے گھر اپنی شان کے مطابق بنائیں گے..اللہ تعالیٰ کی شان کتنی عظیم ہے سبحان اللہ..اللہ تعالیٰ توفیق دے دے..ہم سب کو اور ہر مؤمن مسلمان کو..دنیا کے پلاٹ جھگڑے اور وبال بن جاتے ہیں لیکن اگر ان پر مسجد بن جائے تو وہ..کعبۃ اللہ کی بیٹیاں بن جاتے ہیں..جلد از جلد یہ سعادت حاصل کریں..عمر گزرتی جارہی ہے..

والسلام

خادم

لاالہ الااللہ محمدرسول اللہ

٭…٭…٭

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

  • القلم کے گذشتہ شمارے و مضامین
  • کارٹون
TAKWIR Web Designing (www.takwir.com) Copyrights Alqalam Weekly Online