Bismillah

631

۲۹جمادی الاولیٰ تا۵جمادی الثانی۱۴۳۹ھ  بمطابق ۱۶تا۲۲فروری۲۰۱۸ء

کوئی روک سکتا تو روک لیتا؟ (قلم تلوار۔نوید مسعود ہاشمی)

Qalam Talwar 631 - Naveed Masood Hashmi - Koi Rok Sakta to Rok Leta

کوئی روک سکتا تو روک لیتا؟

قلم تلوار...قاری نوید مسعود ہاشمی (شمارہ 631)

7ستمبر1974ئ؁ کو پاکستان کی قومی اسمبلی نے متفقہ طور پر آئینی طریقِ کار کے تحت منکرینِ ختم نبوت یعنی قادیانیوں، مرزائیوں کو غیر مسلم قرار دے کر۔۔۔ مسلمانوں کی صفوں میں گھسے ہوئے مرتد کافروں کو ہمیشہ ہمیشہ کیلئے نکال باہر کیا تھا۔۔۔ اور6فروری2018 ئ؁ کے دن آزاد جموں و کشمیر کی قانون ساز اسمبلی نے ختم نبوت ایکٹ منظور کر کے قادیانیوں کو غیر مسلم قرار دے کر کشمیری مسلمانوں کی صفوں کو مستقل بنیادوں پر پاک کر ڈالا۔

دلچسپ بات یہ ہے کہ پاکستان سے بھی پہلے1973ئ؁ میں آزاد کشمیر کی اسمبلی میں منبر اسمبلی میجر محمد ایوب مرحوم نے ختم نبوت قرار پیش کی تھی۔۔۔ مگر یہ بدقسمتی تھی کہ آزاد کشمیر کی مقدس دھرتی۔۔۔ ختم نبوت کے حوالے سے قانون سازی سے محروم رہی۔۔۔ قادیانی لابی، ختم نبوت پر ڈاکہ زنی میں مصروف رہی۔۔۔ اور آزاد کشمیر میں انتہائی ڈھٹائی کے ساتھ اپنے آپ کو مسلمان گردانتی رہی۔۔۔ تقریباً تین سال قبل اس خاکسار کا ٹاکرا اسلام آباد کے ایک پنج ستارہ ہوٹل کی تقریب میں ایک ایسے شخص سے ہو گیا کہ جس نے مجھے کالم نگار اور صحافی سمجھ کر مجھ سے ہاتھ ملاتے ہوئے بڑے فخر سے کہا کہ وہ احمدی مسلمان ہے۔۔۔ میں نے اس کا ہاتھ جھٹکا اور کہا کہ قادیانی، احمدی مسلمان نہیں، کافر اور مرتد ہیں۔۔۔ وہ میری بات سن کر چونکا اور کہنے لگا کہ میں ’’کشمیری، احمدی مسلمان‘‘ ہوں۔۔۔ میں نے پھر جواب دیا کہ قادیانی پاکستان کا ہو، کشمیر کا ہو، انڈیا کا ہو، عرب کا ہو، یا عجم کا۔۔۔ وہ کافر ہی رہے گا، بحث تیز ہوئی۔۔۔ تو لہجے بھی تلخ ہو گئے۔۔۔ موصوف نے کافی گرم لہجے میں کہا کہ’’میںتو آپ کو کالم نگار اور صحافی سمجھتا تھا۔۔۔ مگر آپ بھی ’’ملا‘‘ نکلے‘‘،گرم لہجے میں اس کا جلا، کٹا جملہ سن کر میری ہنسی چھوٹ گئی۔۔۔ اور میں نے اس کی عقل پر ہنستے ہوئے کہا کہ میں سب سے سے پہلے’’مسلمان‘‘ اور بعد میں کچھ اور ہوں۔۔۔ مجھے ہنستے ہوئے دیکھ کر۔۔۔ وہ اور تلملایا۔۔۔ اور کہنے لگا کہ کشمیر میں تمہاری نہیں چلے گی۔۔۔ اس سے پہلے کہ اس خاکسار کی جہادی رَگ پھڑکتی۔۔۔ دوست مجھے کھینچتے ہوئے۔۔۔ دوسری طرف لے گئے۔

تین سال قبل وہ پہلا دن تھا کہ۔۔۔ جب مجھے پتہ چلا کہ آزاد کشمیر میں منکرینِ ختم نبوت، قانون سازی نہ ہونے کی وجہ سے۔۔۔ دِل کھول کر گمراہی پھیلا رہے ہیں۔۔۔آزاد کشمیر کے بریلوی علماء ہوں، دیو بندی علماء ہوں، اہلحدیث علماء ہوں، سیکولر ہوں یا غیر سیکولر۔۔۔ یہ بات بخوبی جانتے ہیں کہ اس خاکسار نے ان کے شانہ بشانہ ختم نبوت کے محاذ پر خادمانہ کردارادا کرنے کی پوری کوشش کی، اللہ پاک۔۔۔ راجہ فاروق حیدر کی حکومت، آزاد کشمیر کی اسمبلی کے ہر رکن، تمام مسالک کے اَکابر علمائِ کرام۔۔۔ اور تحریکِ ختم نبوت میں شامل ہر کشمیری مسلمان کے ایمانی جذبات اور ختم نبوت کے محاذ پر پیش کی جانے والی خدمات کو قبول فرمائیں۔

میرے نزدیک آزاد کشمیر میں دَجّال مرزا غلام احمد قادیانی کے پیروکاروں کا قانونی طور پر غیر مسلم اور کافرقرار پاجانا۔۔۔ جہادِ کشمیر کی حقانیت کا منہ بولتا ثبوت ہے۔۔۔ آزادکشمیر کو مقبوضہ کشمیر میں جاری تحریک جہاد کا بیس کیمپ کہا جاتا ہے۔۔۔ مرزا غلام احمد قادیانی نام کے پلیت جانور نما شخص کو انگریز سامراج نے جہاد و قتال کی عظیم عبادت کو بدنام کرنے کیلئے ہی کھڑا کیا تھا۔۔۔ چنانچہ ہر مسلمان اس بات سے بخوبی واقف ہے کہ’’مرزا لعین‘‘ نے جہاد کی عبادت کو نعوذباللہ حرام تک کہنے اور لکھنے سے دریغ نہ کیا۔۔۔ 6فروری2018ئ؁ کے دن وزیراعظم راجہ فاروق حیدر کی قیادت میں قانون ساز اسمبلی نے متفقہ طور پر مرزا قادیانی ملعون کے پیروکار، ختم نبوت کے باغیوں کو کافر قرار دے کر۔۔۔ اس کے تاریک خیالات و نظریات کو مسترد کر کے مقبوضہ کشمیر کے مظلوم مسلمانوں کو بڑا واضح اور دو ٹوک پیغام دے دیا، کہ مرزا قادیانی اور اس کے نظریات پر اَربوں بار لعنت بھیج کر۔۔ کشمیر میں جاری جہاد پوری آب و تاب کے ساتھ جاری رکھا جائے گا۔۔۔ مقبوضہ کشمیر میں مسلمانوں کے بہائے جانے والے خون کے ایک ۔۔۔ ایک قطرے کا انتقام بھارتی سورماؤں سے جہادی راستوںپہ چلتے ہوئے لیا جائے گا۔۔۔ حضرت محمد کریمﷺ کی غلامی اور محبت میں کشمیری ہوں، پاکستانی، عربی ہوں یا عجمی۔۔۔ ہم سب ایک ہیں۔۔۔ ہم فرقہ واریت ہو، لسانیت ہو، سیاسی انتشار ہو، یا صوبائیت۔۔۔ ان سب چکروں پر لعنت بھیجتے ہیں۔۔۔ جو رسول اللہﷺ کا سچا غلام ہے۔۔۔ وہ ہمارا اِمام ہے۔۔۔ کچھ نہیں رکھا ہوا، سیکولر ازم میں۔۔۔ کچھ نہیں پڑا لبرل ازم میں۔۔۔ کچھ نہیں دھرا ہوا’’دھریت ‘‘ میں۔۔ یہ سب شیطان کے چکر ہیں۔۔ یہ سب شیطانی رنگ،ڈھنگ ہیں۔۔۔ کامیابی کا دارو مدار غلامیٔ رسولﷺ میں ہے۔۔۔ جو غلامیٔ رسولﷺ میں جتنا سچا ہو گا۔۔۔ وہ اتنا ہی کامیاب ہوگا۔۔۔ بھاڑ میں گئی جدت پسندی۔۔۔ جہنم میں گئے ڈالر اور پاؤنڈ۔۔۔ کھڈے میں گئے۔۔۔ امریکہ اور برطانیہ کے ویزے اور پاسپورٹ۔۔۔ کوئی روک سکتا تو روک لیتا۔۔۔ کسی مدرسے، مسجد یا مولوی نہیں۔۔ کسی جہادی کمانڈر یا امیر نے نہیں۔۔۔ بلکہ حکومت آزاد کشمیر نے اپوزیشن جماعتوں کے ساتھ مل کر متفقہ طور پر نبی ٔملاحمﷺ کی ختم نبوت کے باغی قادیانی ٹولے کو قانونی طور پر غیر مسلم قرار دے کر یہ بات ثابت کر دی کہ:

محمد ﷺ کی غلامی دینِ حق کی شرطِ اول ہے

اِسی میں ہو اگر خامی تو سب کچھ نا مکمل ہے

قادیانی، جتنی چاہیں شکایتیں لگائیں۔۔۔ پروپیگنڈا کرلیں، امریکہ کو کہیں یا برطانیہ کو ۔۔۔ ہمارا قلم ختم نبوت کے دشمنوں کے خلاف تلوار بنا رہے گا۔۔ جو میرے پاکیزہ نبیﷺ کی ختم نبوت کا دشمن ہے۔۔ نہ وہ کبھی پاکستان کا دوست ہو سکتا ہے اور نہ ہی کشمیر کا۔۔

٭……٭……٭

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

  • القلم کے گذشتہ شمارے و مضامین
  • کارٹون
TAKWIR Web Designing (www.takwir.com) Copyrights Alqalam Weekly Online