Bismillah

664

۸تا۱۴صفر المظفر۱۴۴۰ھ  بمطابق    ۱۹تا۲۵اکتوبر۲۰۱۸ء

مقتل کی زینت ہم سے ہے (نظم ۔ پروفیسر انور جمیل)

مقتل کی زینت ہم سے ہے

قطعات

واسطہ آہ و فغاں سے ہے ، نہ چشمِ نم سے ہے

ضبط و ہمت ، حوصلہ اور جذبۂ محکم سے ہے

ہم نے دیں خونِ شہادت سے اسے رعنائیاں

رنگ و خوشبو جو بھی ہے ، مقتل کی زینت ہم سے ہے

٭…٭…٭

جب تک جہاں میں پیکر حسنِ یقیں رہے

ہم عظمتوں کی سیج پہ مسند نشیں رہے

طاغوت کی مجال کیا آتا وہ سامنے؟

انورؔ فقط یہ بات کہہ ہم وہ نہیں رہے

٭…٭…٭

فلاحِ قوم کے سارے طریق دیکھ لئے

سوا جہاد کے اب تو کوئی بھی چارہ نہیں

ہو کامیاب ہی ، غازی یا تم شہید بنو

یہ وہ عمل ہے کہ جس میں کوئی خسارہ نہیں

٭…٭…٭

ہو زندگی میں اگر شاد تو مبارک ہو

مزہ تو تب ہے کہ مر کے بھی شاد ہو جاؤ

تمہیں تلوار کی توفیق گر نہیں حاصل

تو مال سے ہی شریکِ جہاد ہو جاؤ

٭…٭…٭

(پروفیسر انور جمیل)

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

  • القلم کے گذشتہ شمارے و مضامین
  • کارٹون
TAKWIR Web Designing (www.takwir.com) Copyrights Alqalam Weekly Online