Bismillah

672

۶تا۱۲ربیع الثانی۱۴۴۰ھ  بمطابق       ۱۴تا۲۰دسمبر۲۰۱۸ء

قادیانیو ں کی حالیہ بھارت یاترا (محمد سلمان عثمانی)

 قادیانیو ں کی حالیہ بھارت یاترا

محمد سلمان عثمانی (شمارہ 630)

قادیانیوں کی اسلام و ملک دشمن سر گرمیاں و سازشیں کسی سے ڈھکی چھپی نہیں جو اکھنڈ بھارت کا مذہبی عقیدہ رکھتے ہوں ان سے بھلا خیر کی توقع کی جاسکتی ہے ؟کبھی بھی نہیں کی جا سکتی،چونکہ قادیانی آئین پاکستان  کو ماننے سے انکا ری ہیں بلکہ یو ں کہوں گا کہ پاکستان کے وجود کے مخالف رہے ہیں اور پاکستان کو بدنام کر نے کا کوئی بھی موقع ہاتھ سے خالی نہیں جا نے دیتے،عالمی استعمارکی تابعداری قا دیانیوں کی فطرت ہے جس کے تحت یہ پاکستان میں انارکی پھیلا نے کے موجب ہو رہے ہیں ،کبھی قانون ناموس رسالت ؐ میں تبدیلی یا خاتمہ ،تو کبھی اسکولوں کے نصاب سے قرآنی آیات کا خاتمہ تو کبھی مذہبی آزادی کا رو نا یہ سب عالمی استعمار کی تابعداری اور ان کی وفا داری کا نتیجہ ہے ۔جس کے تحت عالمی و صیہونی قوتیں پاکستان کے اندرونی معاملات میں مداخلت کر رہی ہیں اور قا دیانیوں کے دفاع میں وہ بول رہے ہیں ،کسی بھی شخص یا ملک کو پاکستان کے اندرونی معاملات میں مداخلت کا کوئی حق نہیں،اسلام و پاکستان کے خلاف قادیانیوں کی خفیہ و ناپاک چالیں ہر دو عشرے میں جا ری رہی ہیں ،یہ وہ قادیانی ہیں کہ پاکستان کے پہلے وزیر خارجہ سر ظفر اللہ خان ملعون نے یہ کہہ کر بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح ؒ کا جنازہ نہ پڑھا کہ یا وہ مرتد ہے یا میں مرتد ہو ں ،اس کے علاوہ اور بھی سینکڑوں واقعات میں تاریخ شاہد ہے جس میں قا دیانیوں نے اسلام و پاکستان کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا،اس کے علا وہ ڈاکٹر عبدالسلام قادیانی نے پاکستان کے ایٹمی راز امریکہ کو فراہم کئے،اور ساتھ یہ کہا کہ میں اس لعنتی ملک میں نہیں رہنا چاہتا جس میں قادیانیوں کو غیر مسلم اقلیت قرار دیا گیا ہو۔یہ سب پاکستان مخالف قوتوںکا کردارہے جن کو قادیانی کہا جا تا ہے،ان سے خیر کی توقع کیسے کی جاسکتی ہے اور بھارت جو ہمارا ازلی دشمن ہے یہ قا دیانی بھارت جا کر کیا پاکستان مخالف پروپیگنڈہ نہیں کرتے ہو ں گے ؟حالیہ نازک ملکی حالات میں قادیانی ہاتھ کو ہم نظر انداز نہیں کر سکتے ۔مورخہ26.27. 28دسمبر2017کو قادیانیوں کا سالانہ جلسہ (قادیان)بھارت میں ہوا، جس میںچناب نگر سے بالخصوص اور پورے پاکستان سے بالعموم  ہزاروں کی تعداد میں قادیانیوںنے شرکت کی اور ان کو سرکاری سرپرستی میںبڑے پروٹوکول کے ساتھ بھارت بھیجا گیا اور محض 1250روپے میں صرف 10منٹ کے اندر ویزہ جا ری کر دیا گیا اور اتنی بڑی تعداد میں قادیانی بھارت پہنچ گئے ،جس کے بعد علماء و مسلم حلقوں میں تشویش کی لہر دوڑ گئی ،یہاں میں حکومت سے پو چھنا چاہتا ہو ں کہ اتنی بڑی تعداد میں قا دیانیوں کا بھارت جا نے کا کیا مقصد ہے؟ ان کے کیا عزائم ہیں؟کس منصوبے کے تحت یہ بھارت جا تے ہیں؟اور صرف چندسو روپے میں اور چند منٹ میں ان کو ویزہ جا ری کر نا کوئی معمولی بات نہیںہے ۔بھارت پاکستان کا ازلی دشمن ہے اور ہر موقع پر پاکستان سے دشمنی کا اظہار کرتا ہے ،پاکستان کے دشمن بھارت میں اتنی بڑی تعداد میں قادیانی کیوں جاتے ہیں ،قادیانیو ںکا پاکستان مخالف و دشمن بھارت جا نا کسی خطرہ سے کم نہیں ، قادیانیوں کے سالانہ جلسہ جو کہ بھارت (قادیان) میں ہر سال ہو تا ہے جس میں بلا شبہ اسلام مخالف زہریلا پروپیگنڈہ کیا جاتا ہے اور اسلام و پاکستان کو پو ری دنیا میں بد نام کیا جا تا ہے ،پاکستان دشمن ملک میں یہ قادیانی آخر کس بنیاد پر جاتے ہیں اس کا سختی سے حکومت کو نوٹس لینا چاہیئے ۔دریں اثناء اس معاملہ پر انٹر نیشنل ختم نبوت موومنٹ کے مرکزی نائب امیر مولانا شبیر احمد عثمانی نے تبصرہ کرتے ہو ئے کہا کہ ہزاروں کی تعداد میں قادیانیوں کا(قادیان)انڈیا جانا ملکی سلامتی کے حوالے سے انتہائی خطرناک ہے ، ،حکومت فی الفور اس مسئلے کا نوٹس لے اوراس کی اعلیٰ سطحی تحقیقات کی جائیں اور قوم کوبتایا جائے کہ اکھنڈ بھارت کا مذہبی عقیدہ رکھنے والے قادیانیوں کو سہولت اور ویزا کن بنیادوں پر فراہم کیا گیا ،انہوںنے کہا کہ اقتدار کی راہداریوں اور سیاستدانوں کی صفوں سے قادیانیوں کو الگ کئے بغیر ملک میں امن قائم نہیں ہوسکتاقادیانی جماعت اور قادیانی لٹریچر اور جرائد اب بھی دہشت گردی کے مرتکب ہورہے ہیں ،جہاد کی تنسیخ کا فتویٰ مرزا غلام احمد قادیانی نے دیا تھا جبکہ اسلام نے جہاد کو فرض قراردیاہے۔انہوںنے کہا کہ قادیانی آئین پاکستان کو مسلسل چیلنج کررہے ہیں اورربوہ میںریاست کے اندر خطرناک ریاست قائم ہے جہاں قادیانی عدالتیں قائم ہیں ،دہشت گردی کی منصوبہ بندی ربوہ کے اندر ہوتی ہے ،چند روز پیشتر ہزاروں قادیانی انتہائی آسانی کے ساتھ ویزے حاصل کرکے انڈیا گئے ،قادیان میں قادیانی اجتماع میں پاکستان دشمنی کے مناظر بھی ریکارڈ پر ہیں ،انہوںنے کہا کہ ہزاروں کی تعداد میں قادیانی بھارت منٹوں میں اور محض 1250/- روپے کے عوض بھارت پہنچ جا تے ہیں ،اور وہ بھی پاکستان کے روایتی دشمن بھارت گئے ہیں ۔

مولانا شبیر احمد عثمانی کے مطابق قادیانی پہلے ہی اکھنڈ بھارت کا خواب دیکھتے ہیں کہ انہوں نے کبھی اسلام و پاکستان کے وجود کو تسلیم ہی نہیں کیا اور پھر قادیانیوں کا بھارت جا نا ایک سیکورٹی رسک ہے، حکو مت فی الفور اس مسئلے کا نو ٹس لے اور یہ بتائے کہ اتنی کثیر تعداد میں قادیانی بھارت کیسے چلے گئے ،ان کا کہنا تھا کہ قادیانی ویسے تو پہلے ہی پوری دنیا میں اسلام کا لبادہ اوڑھ کر لو گوں کو گمراہ کرتے ہیں اور پاکستان کے خلاف خاص طور پر زہریلا پروپیگنڈہ اگلتے رہتے ہیں ،امسال بھی قادیانیوں نے اپنے نام نہاد جلسہ قادیان کے موقع پر اسلام و پاکستان کو خوب بدنام کیا اور اپنے مغربی آقائو ں کی خوب اشیرباد حاصل کی اور یہی قادیانیوں کا اور مغربی قوتوں کا اصل مقصد ہے ،انہو ں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ قادیانیوں کی بڑھتی ہو ئی ریشہ دوانیوں اور اسلام وملک دشمن سر گرمیوں پر کڑی نگاہ رکھے اور ان کو آئین و قانون کا مکمل پابند بنائے ۔

٭…٭…٭

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

  • القلم کے گذشتہ شمارے و مضامین
  • کارٹون
TAKWIR Web Designing (www.takwir.com) Copyrights Alqalam Weekly Online