Bismillah

606

۲۵ذیقعدہ تا۱ذی الحجہ۱۴۳۸ھ  بمطابق    ۱۸تا۲۴ اگست ۲۰۱۷ء

اے خیر کے طلبگار!آگے بڑھ (نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی)

Naqsh-e-Jamal 596 - Mudassir Jamal Taunsavi - Aage barh

اے خیر کے طلبگار!آگے بڑھ

نقش جمال .مدثر جمال تونسوی (شمارہ 596)

اللہ تعالیٰ ہمیں شکر کی توفیق نصیب فرمائے۔

کیا آپ جانتے ہیں کہ شکر کہتے کسے ہیں؟ شکر تین چیزوں کا نام ہے:

(۱)اللہ تعالی کی نعمتوں کو خود پر محسوس کرنا، ہر لمحہ ان نعمتوں کا استحضار رکھنا…

(۲)ہر نعمت کو اللہ تعالیٰ کا فضل سمجھنا…

(۳)اللہ تعالیٰ کی رضاء کے موافق ہر نعمت کو استعمال میں لانا…

لیجئے!وہ مبارک مہینہ شروع ہے جو صحیح معنوں میں برکتوں کاخزانہ ہے…

جی ہاں!خیرات وبرکات کا مہینہ رمضان آپہنچا …نیکیوں اور رب تعالیٰ کی قربتوں کا مہینہ رمضان آپہنچا…

روزوں اور قیام اللیل کا خاص مہینہ آپہنچا…

ذکر، استغفار، دعاء اورمناجات کا مہینہ آپہنچا…

جود وسخاء اوراِنفاق واِحسان کا مہینہ آپہنچا…

ہمدردی وغم خواری اورایمان واِحتساب کا مہینہ آپہنچا…

قرآن اورجہاد والا مہینہ آپہنچا…

وہ مہینہ جس میں قرآن کریم نازل ہوا

وہ مہینہ جس کو اللہ تعالیٰ نے سال کے دورانیہ کے لیے کفارہ بنادیا

وہ مہینہ جس کے آتے ہی جنت کے دروازے کھول دیئے جاتے ہیں

وہ مہینہ جس کے آتے ہیں جہنم کے دروازے بند کردیئے جاتے ہیں

وہ مہینہ جس کے آتے ہیں شیاطین اور سرکش جنوں کو بیڑیوں میں جکڑ دیا جاتا ہے

وہ مہینہ جس میں گناہ گاروں کے لیے اپنے آپ کو اللہ تعالیٰ کے عذاب سے بچا لینے کا پورا سامان موجود ہے

وہ مہینہ جس میں جنت کے طلبگاروں کے لیے راستے کشادہ کردیئے جاتے ہیں

وہ مہینہ جس میں دینی سربلندی اورجنت کے بلند درجات حاصل کرنے کا خاص موقع حاصل ہوتا ہے

وہ مہینہ جس میں ایک عمرہ کرنا نبی کریمﷺ کے ساتھ حج کی سعادت حاصل کرنے کی مانند ہے

وہ مہینہ جس میں ایک ایسی رات ہے جو عبادت گزاروں کے حق میں ہزار راتوں سے بہتر ہے

وہ مہینہ جس میں اہل ایمان کے لیے خیر ہی خیر اوربرکت ہی برکت ہے جبکہ منافقین کے لیے یہ مہینہ بہت ہی گراں اور برا ثابت ہوتا ہے

وہ مہینہ جس میں غزوہ بدر اورفتح مکہ جیسے عظیم جہادی معرکے بپا ہوئے

وہ مہینہ جس میں مسلمانوں کو فتوحات اور کفر و شرک کے پجاریوں کو ذلت وشکست کا سامنا کرنا پڑتا ہے

وہ مہینہ جس میں مسلمان اپنا مال اللہ تعالی کی راہ میں خوب خرچ کرتے ہیں جبکہ منافقین ایمان والوں کی غیبت کرتے اور ان کے عیوب کو تلاش کرنے میں لگے رہتے ہیں

کیا ہم اس مبارک مہینے کی قدر ومنزلت سے واقف ہیں؟

٭…٭…٭

نبی کریمﷺکا فرمان ہے:

مسلمانوںپر رمضان سے بہتر کوئی مہینہ نہیں آتا اور منافقوں پر رمضان سے بڑھ کر برا مہینہ کوئی نہیں آتا، مومن کا اجر وثواب(اس کی سچی نیت کی وجہ سے) رمضان سے پہلے ہی لکھ دیا جاتا ہے اور منافق کی بدبختی اورگناہ(اس کی بدنیتی اوربدباطنی کی وجہ سے) رمضان آنے سے پہلے ہی لکھ دیا جاتا ہے۔ مومن اس میں مال خرچ کرتا ہے تاکہ عبادت میں قوت اور طاقت حاصل ہوجبکہ منافق اس مہینے میں مسلمانوں کی غیبت اور ان کے عیوب تلاش کرنے میں لگا رہتا ہے۔ چنانچہ یہ مہینہ مومن کے حق میں سراپا غنیمت ہے جبکہ (منافق اور) فاجر شخص کے لیے سراسر ذلت اور عار ہے(بیہقی، طبرانی، ابن خزیمہ، منذری)

رمضان ایک خدائی مہمان ہے، اللہ تعالی کا خاص انعام ہے، اس کا اکرام کرنا، اس کو خوش کرنا ہر مسلمان کی ذمہ داری ہے، بعض بزرگ اسلاف کے بارے میں یہ واقعات منقول ہیں کہ وہ رمضان آنے سے چھ ماہ پہلے ہی اس کو حاصل کرنے اور اس تک پہنچنے کی دعاء شروع کردیتے تھے اور جب رمضان گزر جاتا تو اگلے چھ ماہ اس گزشتہ رمضان کی قبولیت کی دعاوں میں گزار دیتے تھے، گویا پورا سال رمضان کی یادوں میں مست رہتے تھے۔

اب جبکہ رمضان المبارک کو شروع ہوئے تقریباً چار سے پانچ دن ہو چکے ہیں۔اب تک جو ہو چکا سو ہو چکا لیکن اسی کو غنیمت سمجھ کر رمضان کے وقت کو قیمتی بنائیں اوراسی وقت سے رمضان کے لیے درج ذیل امور کا اہتمام شروع کردیں!

استغفار اورتوبہ: سب سے پہلے تو یہ ضروری ہے کہ ہم سچے دل کے ساتھ اللہ تعالی سے اپنے گناہوں اور کوتاہیوںکی معافی مانگیں اوراللہ تعالی سے یہ التجاء کریں کہ اے اللہ!ہمارے گناہوں کی نحوست سے ہمیں رمضان کی برکات سے محروم نہ فرما!اے اللہ! ہماری فضولیات کی وجہ سے ہمیں رمضان کی باسعادت گھڑیوں سے محروم نہ فرما!

اس لیے جو موٹے موٹے گناہ اور فضولیات ہیں جیسے سگریٹ پینا، گانے سننا، عورتوں کا بے پردہ گھومنا، عریاں لباس پہننا، مردوں اور عورتوں کا ملاجلا رہنا، داڑھیاں مونڈوانا، حرام طریقوں سے مال کمانا، حرام چیزیں دیکھنا، بیوی پر ظلم کرنا، بچوں کو بری عادات میں مبتلا کرنے کا ماحول دینا، غیبت کرنا، جھوٹ بولنا، لوگوں کے عیب تلاش کرنا، دن میں گرمی کے بہانے سوئمنگ پولوں میں نہانے کے لیے جانا اوروہاں جاکر فضول گپ شپ میں گھنٹوں ضائع کردینا، راتیں کھیل کود یا فلمیںدیکھنے میں برباد کردینا، الغرض سب سے پہلے سچے دل سے توبہ کرلیں اور توبہ کا پہلا قدم اپنے گناہوں کو چھوڑدینا ہے، اس لیے پہلی فرصت میں یہ قدم اٹھالیجئے تاکہ منزل کی طرف بڑھنا آسان ہوجائے

نعمتِ رمضان پرشکر:

 اس بات کا ہرروزشکر اداء کرتے رہیں کہ اللہ تعالیٰ نے اپنے فضل سے اس مبارک مہینے تک پہنچا دیا تاکہ اس مبارک مہینے میں نیکیاںاور سعادتیں سمیٹ لی جائیں، زیادہ سے زیادہ عبادات کر لی جائیں، ورنہ کتنے ہی ایسے لوگ ہیں جو دل سے اس رمضان کے قدردان تھے مگر اب وہ اس دنیا میں نہیں رہے اور کتنے ہیں ایسے لوگ ہیں جو بیماری یا کسی اور دنیاوی مصیبت میں پھنس چکے ہیں اور اب نہ ہی روزہ رکھ سکتے ہیں اورنہ ہی دیگر عبادات بجا لاسکتے ہیں۔ اس لیے اس بات پر اللہ تعالی کا شکر اداء کریں کہ اس نے زندگی عطاء فرمائی اور صحت و عافیت کے ساتھ رمضان نصیب فرمادیا۔ یہ شکرکریں گے تو نعمت میں اضافہ ہوگا اور اجر وثواب ملے گا ورنہ ناشکری کا وبال نعمت بھی چھین لے گا اورگناہوں کو بوجھ بھی کندھوں پر لاددیا جائے گا (معاذ اللہ)

رمضان کے احکام سیکھ لیں:

ابھی رمضان کا بالکل آغاز ہے، اس لیے بہترین موقع ہے کہ اہل علم کی مجالس میں حاضر ہوکر یا کوئی بھی ایسی مستند کتاب حاصل کرلیں جس میں رمضان کے بارے میں تمام ضروری ہدایات اور تمام ضروری احکامات آسان اورعام فہم انداز میں موجود ہوں تاکہ رمضان کو علم کی روشنی میں قیمتی بنایا جاسکے وگرنہ کہیں ایسا نہ کہ جہالت کی وجہ سے نہ تو بہت سی نیکیوں کا پتہ چلے گا اورنہ ہی بہت سے گناہوں کا احساس ہو اس طرح نیکیاں برباد اورگناہ لازم ہوتے رہیں گے اورجہالت کی وجہ سے اس عظیم نقصان کا احساس تک نہ ہوگا۔ اس حوالے سے شیخ الحدیث مولانا زکریا صاحبؒ کی کتاب فضائل رمضان کا ایک بار مکمل مطالعہ کرلینا کافی مفید ہوگا۔ ان شاء اللہ

 بلند ہمت بنیں!

سستی، کاہلی اور فضولیات میں تن آسانی ہرانسان کو مرغوب ہوتی ہے مگر یہی چیز حقیقت میں انسان کے لیے زہرقاتل ہے، اس سے بچنے کا ایک ہی راستہ ہے اور وہ ہے چستی۔ رمضان کے روزے، راتوں کا قیام، دن بھر کے دعوتی اورجہادی اسفار ، تلاوت قرآن اورذکر کی کثرت بظاہر یہ چیزیں کافی مشکل نظر آتی ہیں مگر صاحبِ ہمت اور پُرعزم انسان کے لیے یہ سب مشکلات آسان ہوجاتی ہیں۔ بقول شاعر:

اگر ہمت کرے انسان تو پھر کیا نہیں بس میں

یہ ہے کم ہمتی جو بے بسی معلوم ہوتی ہے

الغرض وہ مبارک مہینہ آپہنچا جو نیکیوں کا موسمِ بہار ہے،جس میں شیاطین مایوس ہوچکے ہوتے ہیں ۔ایک ایسا مہینہ جس میں اللہ تعالی کی خاص رحمت متوجہ ہوتی ہے اور آسمانوں سے یہ آواز لگائی جاتی ہے:

یاباغی الخیر اقبل

اے خیرکے طلبگار! آگے بڑھ

یاباغی الشر اقصر

اے برائی کے چاہنے والے! رُک جا

٭…٭…٭

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

  • القلم کے گذشتہ شمارے و مضامین
  • کارٹون
TAKWIR Web Designing (www.takwir.com) Copyrights Alqalam Weekly Online