Bismillah

671

۲۸ربیع الاول تا۴ربیع الثانی۱۴۴۰ھ  بمطابق       ۷تا۱۳دسمبر۲۰۱۸ء

اسرائیلی فوجی کیمپ پر بم حملہ، فائرنگ سے بچے سمیت 5 شہری شہید،120زخمی

(شمارہ 660)

اسرائیلی فوجی کیمپ پر بم حملہ، فائرنگ سے بچے سمیت 5 شہری شہید،120زخمی

یہودی کو مغربی کنارے میں نشانہ بنایا گیا، صہیونیوں کی فائرنگ سے حملہ آور کو بھی شہید،14فلسطینیوں پر سفری پابندی عائد،گزشہ ماہ غزہ میں زخمی نوجوان چل بسا
غزہ کی سرحد پر احتجاج کرنیوالے فلسطینیوں پر اسرائیلی فورسز کی براہ فائرنگ،نہتے مظاہرین کا قابض فوج پر پتھراؤ،بحری ناکہ بندی توڑنے والی کشتی پر گولی باری، متعددافراد زخمی

مقبوضہ بیت المقدس(نیٹ نیوز)فلسطین میں اسرائیلی فورسز کے مظالم کا سلسلہ جاری، غزہ سرحد پر احتجاج کرنے والوں پر دہشت گرد فورسز نے براہ راست فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں بچے سمیت 3 فلسطینی شہید اور 120 زخمی ہوگئے، مغربی کنارے میں فلسطینی نوجوان نے چاقو گھونپ کر یہودی کو واصل جہنم کردیا جوابی حملے میں فائرنگ کرکے صہیونیوں نوجوان کو بھی شہید کردیا،غزہ پٹی پر شیلنگ کے دوران زخمی ہونے والا ایک نوجوان بھی جام شہادت نوش کرگیا،صہیونی فورسز نے 85 فلسطینی مزدوروں کو گرفتار کرلیا جبکہ 5 فلسطینیوں کے گھر بھی مسمار کردیئے، غزہ کی سرحد پر احتجاج کرنیوالے فلسطینیوں پر اسرائیلی فورسز  کی براہ فائرنگ،نہتے مظاہرین کا قابض فوج پر پتھراؤ،بحری ناکہ بندی توڑنے والی کشتی پر گولی باری، متعددافراد زخمی۔تفصیلات کے مطابق غزہ کی سرحد پر احتجاج کرنیوالے فلسطینی مظاہرین پر اسرائیلی فائرنگ سے بچے سمیت 3 نوجوان شہید اور 120 سے زائد زخمی ہوگئے۔ عالمی میڈیا کے مطابق ہزاروں فلسطینی نوجوانوں، خواتین اور بچوں نے حقوق بحالی تحریک اور امریکی سفارت خانے کی مقبوضہ بیت المقدس منتقلی کیخلاف اسرائیلی سرحد کے قریب قابض فوج کے خلاف احتجاج کیا۔ مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے اسرائیلی فوج نے ایک بار پھر وحشیانہ کارروائیاں کرتے ہوئے براہ راست گولیاں ماریں اور آنسو گیس شیل فائر کئے ،جس کے نتیجے میں 12 سالہ فلسطینی سمیت 3 نوجوان شہید ہوگئے۔ غزہ کی وزارت صحت کا کہنا ہے کہ اسرائیلی فائرنگ سے ایک نوجوان شمالی اور دوسرا جنوبی غزہ کے علاقے خان یونس میں شہید ہوا، جبکہ 120 افراد زخمی ہیں، جن میں 6 کی حالت تشویش ناک ہے۔ نہتے مظاہرین نے ٹائرجلائے اور قابض فوج پر پتھراؤ کیا۔مظاہروں میں نوجوانوں کے ساتھ ساتھ خواتین کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔مقبوضہ مغربی کنارے میں نوجوان فلسطینی نے چاقو گھونپ کر یہودی کو ماردیا، جواباً ایک اور اسرائیلی شہری نے اپنی پستول سے فائرنگ کرکے حملہ آور نوجوان کو شہید کردیا۔ادھر اسرائیلی فوج کی جانب سے گزشتہ ماہ غزہ میں ہونے والی جھڑپ کے دوران شیلنگ زخمی ہونے والا فلسطینی لڑکا زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسا۔فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی کی رپورٹ کے مطابق وزارت صحت کے حکام کا کہنا تھا کہ 16 سالہ صحیب ابو کاشف کو اسرائیلی فوج نے 3 اگست کو غزہ پٹی میں شیلنگ سے زخمی کیا تھا۔علاوہ ازیں قابض صہیونی فوج نے مقبوضہ مغربی کنارے کے شمالی شہر جنین سے تعلق رکھنے والے 85 فلسطینی مزدوروں کو حراست میں لے لیا۔ ان تمام فلسطینیوں کی گرفتاری سنہ 1948ئکے مقبوضہ فلسطینی علاقوں میں داخلے کی آڑ میں عمل میں لائی گئی۔مرکزاطلاعات فلسطین کے مطابق فلسطین لیبر یونین کے رکن ریاض کمیل نے ایک پریس بیان میں بتایا کہ صہیونی سیکیورٹی فورسز نے شمالی فلسطین کے علاقے طبریا سے 85 فلسطینی مزدوروں کو غیرقانونی طورپرآنے اور قیام کرنے کے الزام میں گرفتار کیا گیا۔ انہیں دوبارہ واپس جنین بھیجنے کی تیاری کی جا رہی ہے۔فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے اور القدس سمیت فلسطین کے دوسرے علاقوں میں اسرائیلی فوج کے روز مرہ کی بنیاد پر جاری رہنے والے کریک ڈاؤن میں اگست کے دوران 484 فلسطینیوں کو حراست میں لینے کے بعد جیلوں میں ڈالا گیا ۔دریں اثناء فلسطین کے مقبوضہ مشرقی المقدس میں ابو دیس کے مقام پر فلسطینی مزاحمت کاروں نے اسرائیلی فوج کے ایک کیمپ  پائپ بم حملہ کیا جس کے نتیجے میں کیمپ میں فوجیوں کی دوڑیں لگ گئیں تاہم کسی قسم کے جانی نقصان کی اطلاع نہیں ملی۔اسرائیل کے عبرانی ٹی وی ’سات‘ نے فوجی ذرائع کے حوالے سے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ فوج کے ایک کیمپ پائپ بموں سے حملہ کیا گیاجس کے نتیجے میں کے مرکزی گیٹ کو نقصان پہنچا۔ غزہ کا محاصرہ توڑنے کی کوشش پر اسرائیلی فورسز نے فلسطینی کشتیوں پر گولیوں کی بوچھاڑ کردی، مقبوضہ بیت المقدس میں غیر قانونی اسرائیلی تعمیرات کے خلاف احتجاج کرنے پر فلسطینی گاؤں کے باسیوں کو شدید تشدد کو نشانہ بنایا گیا، صیہونی فورسز نے متعدد افراد کو حراست میں لے لیا۔ مغربی کنارے کے جنوبی شہر بیت لحم میں المنیا کے مقام پر فلسطیی شہریوں کے زیتون کے باغات پر حملہ کر کے کم سے کم 200 پھل دارپودے نذرآش کر ڈالے۔مرکز اطلاعات فلسطین کے مطابق المنیا کی دیہی کونسل کے چیئرمین زاید کوازبہ نے بتایا کہ یہودی ا?باد کاروں نے رات کی تاریکی سے فایدہ اٹھاتے ہوئے فلسطینیوں کے زیتون کے باغات میںآگ لگا دی جس کے نتیجے میں 10 دونم پر پھیلے زیتون کے درخت جل کر خاکستر ہوگئے۔مرکز اطلاعات فلسطین کے مطابق گھر گھر تلاشی کی کارروائیوں میں روز مرہ کی طرح فلسطینی خواتین، بچوں اور بوڑھوں کو ہراساں کیا گیا۔ گھروں میں تلاشی کی آڑ میں قیمتی سامان کی توڑپھوڑ کی گئی اور شہریوں کے نقدی اور زیورات لوٹ لیے۔

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

  • القلم کے گذشتہ شمارے و مضامین
  • کارٹون
TAKWIR Web Designing (www.takwir.com) Copyrights Alqalam Weekly Online