Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

سوانح حضرت امیرِ شریعتؒ (قسط۲۸)

سوانح حضرت امیرِ شریعتؒ  (قسط ۲۸)

(شمارہ 585)

۵۷)ایک مرتبہ حضرت شاہ صاحبؒ نے چک جھمرہ میں تقریر کرتے ہوئے ارشاد فرمایا:

میری عمر کا زیادہ حصہ ریل میں گذرا یا جیل میں، علامہ طالوت صاحب بھی تقریر میں موجود تھے ،ا نہیں یہ مشہور رباعی یاد آگئی

صبح دم کام سے گذرتی ہے

شب ولارام سے گذرتی ہے

عاقبت کی خبر خدا جانے

اب تو آرام سے گذرتی ہے

 علامہ صاحب نے اس رباعی کو حسب حال بنا کر شاہ جی کو اس طرح سنائی:

صبح دم ریل گذرتی ہے

شب کسی جیل میں گذرتی ہے

عاقبت کی خبر خداجانے

اب تو اس کھیل میں گذرتی ہے

 شاہ صاحب نے اسے بہت پسند فرمایا اور کہا: میرے بھائی آپ نے ایک رباعی کو مسلمان کردیا۔( امروز: ص۷)

۵۸)خیر المدارس میں جالندھر کا سالانہ جلسہ تھا حضرت امیر شریعتؒ بھی شریک ہوئے تھے۔ حضرت شاہ صاحبؒ کھانا تناول فرمارہے تھے کہ ایک نوجوان بھنگی صفائی کے لئے آیا، آپ نے اس کو بلایا ہاتھ دھلائے اور اپنے ساتھ دستر خوان پر بٹھا کر فرمایا:’’میرے ساتھ کھانا کھائو‘‘وہ تھر تھر کانپنے لگا اور پیچھے ہٹتے ہوئے عرض کیا: میں چوڑھا( یعنی میں تو بھنگی ہوں)

حضرت امیرشریعت نے فرمایا:تو کیا چوڑھا انسان نہیں ہوتا؟ بھائی تم بھی میرے طرح انسان ہو آئو ہم مل کر کھانا کھائیں۔ یہ فرما کر پانی کا ایک گلاس اس بھنگی کی طرف بڑھاتے ہوئے حکم دیا: لو! پیو۔

اس نے دوچارگھونٹ پئے، حضرت نے اس کا بچا ہوا پانی خود نوش فرما لیا، اب اس کا احساس کمتری کافور تھا۔ اس نے بڑھ کر حضرت کے ساتھ کھانا شروع کردیا۔ حضرت کے خلوص وللہیت کا یہ اثر ہوا کہ شام کو وہ نوجوان اپنی بیوی کو لے کر حاضر خدمت ہوا اور عرض کیا: اللہ کے لئے ہم دونوں کو کلمہ پڑھا کر مسلمان کرلیجئے۔(پیام اسلام: ص۲۴)

٭…٭…٭

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor