Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

نفیس پھُول ۔ 689

نفیس پھُول

امام جمال الدین ابن الجوزیؒ

(شمارہ 689)

نفسانی وساوس

میں کبھی سوچتا ہوں کہ کسی حیلہ اور تدبیر کے ذریعہ کچھ دنیا مباح درجہ میں حاصل کرلوں مگر اس سے تقویٰ کا پہلو ضرور متاثر ہوتا ہے اور پہلے پہل دینی منافع تو مل جاتے ہیں مگر اخلاص کی لذت جاتی رہتی ہے اور بالآخر منافع کے وہ پستان بھی خشک ہوجاتے ہیں اور کچھ بھی ہاتھ پلے نہیں رہتا۔

 تب میں نے اپنے جی سے کہا کہ تیری مثال اس ظالم حکمران کی سی ہے جس نے ناجائز طریق سے مال جمع کیا، تفتیش ہوئی تو جو ظلماً جمع کیا تھا وہ تو گیا ہی جو اپنا اصل تھا اسے بھی ساتھ لے گیا۔ لہٰذا حیلہ اور تاویل کے فساد سے بہت ہی بچ کے رہئے کہ اللہ تعالیٰ کو دھوکہ نہیں دے سکتے اوراس کے خزانوں سے نافرمانی کے ذریعہ کچھ لیا نہیں جا سکتا۔

 ذہن کی صفائی کے موانع( رکاوٹیں)

میں نے اپنے نفس کو دیکھا ہے کہ جب کبھی اس کی فکر اور سوچ میں نکھار ہوتا ہے یا کوئی نصیحت آموزواقعہ پیش آتا ہے یا صالحین کی قبور کی زیارت کا موقع ہوتا ہے تو توجہ الی اللہ اور گوشہ تنہائی کی طلب کے لئے اس میں ایک تحریک اور ہیجان پیدا ہوتا ہے، اسی سلسلہ میں اس سے ایک دن بات کرتے ہوئے میں نے کہا کہ ذرااپنا مقصد بتائو اورمنتہائے مطلوب ذکر کرو۔

٭…٭…٭

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor