آرمینیا میں حضرت حبیب بن مسلمہ کی فتوحات (عہد زریں۔532)

آرمینیا میں حضرت حبیب بن مسلمہ کی فتوحات

عہد زریں (شمارہ 532)

قالیقلا کی فتح کے بعد جب کوفہ سے بھی کچھ اسلامی لشکر ان کے ساتھ آکر مل گئے تویہ لشکر اپنے قائد حضرت حبیب بن مسلمہ کی قیادت میں درج ذیل ترتیب سے آگے بڑھا:

۱)خلاط کے راستے سے مربالا کی طرف پیش قدمی کی گئی اور صلح کے ذریعے یہ علاقہ فتح ہوا۔

۲)خلاط سے آگے بڑھنے کے بعد راستے میں ہی بسفرجان کے ایک نمائندے سے ملاقات ہوئی اور ان کے لئے امان و صلح کا پیغام لکھ کر بھیج دیا گیااور یوں بسفرجان کا علاقہ بھی زیر نگیں ہوا۔

 ۳)بعدازاں ارجیش اور باخنیس کی بستیوں کے سربرآوردہ لوگوں کو بلا کر ان کا معاملہ بھی صلح و صفائی سے نمٹا دیا گیا۔

 ۴)حضرت حبیب بن مسلمہ خوداردشاط کی طرف بڑھے اور دیبل میں پڑائو ڈالا، اولاً وہ لوگ قلعہ بند ہوئے۔ مسلمانوں نے منجنیق نصب کرکے انہیں ہتھیار ڈالنے پر مجبور کردیا بالآخر وہ صلح پر آماد ہ ہوگئے اور یوں یہ دیبل کا علاقہ بھی فتح ہوگیا۔

ان کی مزید فتوحات کا تذکرہ آئندہ آئے گا۔ ان شاء اللہ

 

 ٭…٭…٭

Ehad-e-Zareen-532