Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

افادات اکابر۔ 635

 افادات اکابر

(شمارہ 635)

جدید نسل کی بے چینی اور ذہنی کرب کے اسباب

ہمارے نزدیک کرب و بے چینی کے متعدد اسباب ہیں، سب سے اہم تو یہ ہے کہ جدید تعلیمی اداروں میں دینی ماحول ،دینی تربیت اور دینی ذہن و فکر کی ضرورت کو کبھی محسوس نہیں کیا گیا بلکہ اس کے برعکس نئی نسل کو دین سے بیزار کرنے کے تمام اسباب و وسائل مہیا کئے گئے، دین کو’’ملائیت‘‘ کا نام دے کر نوخیز ذہنوں کو اس سے نفرت دلائی گئی، علماء دین کے لئے طرح طرح کے القاب تجویز کر کے انہیں’’تعلیم یافتہ‘‘ طبقہ کی نظر میں گرانے کی ہر ممکن کوشش کی گئی، ذرائع نشرواشاعت کو تمام حدودوقیود سے آزاد کر کے انہیں بددینی کا مبلغ بنادیا گیا۔ اس پر مستزادیہ کہ لادینی نظریات کا پرچار کرنے کے لئے مستقل ادارے قائم ہوئے اور سرکاری طور پر ان کی بھر پور حوصلہ افزائی کی گئی ۔ اب خود سوچئے کہ جس نوخیز نسل کے سامنے گھر کا پورا ماحول بے دین ہو، تعلیم گاہوں میں دینی ماحول کا فقدان ہو،گلی کوچوں سڑکوں اور بازاروں سے بے دینی کا غلیظ اور مسموم دھواں اُٹھ رہا ہو،زندگی کے ایک ایک شعبہ سے دین کو کھرچ کھرچ کر صاف کردیاگیا ہو، والدین سے اساتذہ تک اور صدر سے چپڑاسی تک نئی نسل کے سامنے دینداری ،خداترسی اور خوف آخرت کا کوئی نمونہ سرے سے موجود نہ ہو اور جس ملک میں قدم قدم پر فواحش و منکرات ،بے حیائی و بداخلاقی اور درندی و شیطنت کا سامان موجود ہو،کیا آپ وہاں کی نئی نسل سے دینداری شرافت اور انسانی قدروں کے احترام کی توقع کر سکتے ہیں؟

(بصائر وعبر:ص ۲۷۸،۲۷۹)

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor