Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

افادات اکابر۔ 639

 افادات اکابر

(شمارہ 639)

پردہ عورت کا فطری حق ہے

اسلام کی نظر میں عورت ایک ایساپھول ہے جو غیر محرم نظر کی گرم ہو اسے فوراً مرجھا جاتا ہے اسے پردہ سے باہرلانا اس کی فطرت کی توہین ہے…

ادھر عورتیں پردے سے باہر آئیں اُدھر انہیں زندگی کی گاڑی میں جوت دیا گیا۔ تجارت کریںتو عورتیں، وکالت کریں تو عورتیں ، صحافت کے شعبہ میں عورتیں ،عدالت کی کرسی پر متمکن ہوں تو عورتیں، اسمبلی میں جائیں تو عورتیں ، الغرض کا روباری زندگی کا وہ کون سابوجھ تھا جو مظلوم عورت کے نازک کاندھوں پر نہیں ڈال دیا گیا، سوال یہ ہے کہ جب یہ تمام فرائض عورتوں کے ذمہ آئے تو مرد کس مرض کی دوا ہیں؟اسلام نے نان و نفقہ کی تمام ذمہ داری مرد پر ڈالی تھی لیکن بزدل مغرب نے’’مردوں کے دوش بدوش چلنے‘‘ کاجھانسہ دے کر یہ سارا بوجھ اُٹھا کر عورت کے سر پر رکھ دیا۔ جدید تہذیب کے نقیبوں سے کوئی پوچھنے والا نہیں کہ یہ عورت پر احسان ہوا یابدترین ظلم؟عورت گھر کے فرائض بھی انجام دے، بال بچوں کی پرورش کا ذمہ بھی لے، مردکی خدمت بھی بجا لائے اور اسی کے ساتھ کسبِ معاش کی چکی میں بھی پسا کرے؟ ظاہر ہے کہ عورت کے فطری قویٰ اتنے بوجھ کے متحمل نہیں ہو سکتے اس کا نتیجہ یہ ہوا کہ گھر کا کاروبار نوکروں کے سپرد کرنا پڑا۔ بچوں کی تربیت و پرداخت مامائوں کے حوالے کی گئی، روٹی ہوٹل سے منگوائی گئی، گھر کا سارا نظام تو ابتر ہو ا ہی ،باہر کے فرائض پھر بھی عورت یکسوئی سے ادانہ کر پائی نہ وہ کر سکتی ہے۔پھر مرد وزن کے اختلاط اور آلودہ نظروں کی آوارگی نے معاشرہ میں جو طوفان برپاکیا اس کے بیان سے زبانِ قلم کو حیا آتی ہے، یہ ہے آزادی ٔ نسواں اور تعلیم نسواں کا پر فریب افسوں جس نے انسانیت کو تہ و بالا اور معاشرے کو کرب و اضطراب میں مبتلا کردیا۔

(بصائر و عبر:ص ۲۸۳)

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor