Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

خواتین اسلام سے رسول اکرمﷺ کی باتیں (شمارہ 671)

خواتین اسلام سے رسول اکرمﷺ کی باتیں

(شمارہ 671)

جھوٹی قسم کے ذریعہ مال حاصل کرنے کی سزا:

ایک حدیث میں ہے کہ حضورﷺ نے ارشاد فرمایا: جس کسی نے جھوٹی قسم کے ذریعہ کوئی مال حاصل کرلیا، وہ اللہ سے اس حال میں ملاقات کرے گا کہ کوڑھی ہوگا۔( ابو دائود شریف)

حضرت عبدالرحمن بن شبل رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ حضور اقدسﷺ نے فرمایا: بلاشبہ تاجر لوگ فاجر ہیں( یعنی بڑے گنہگار ہیں) صحابہ رضی اللہ عنہم نے عرض کیا :یا رسول اللہ!کیا اللہ نے خرید و فروخت کو حلال نہیں قرار دیا؟ آپﷺ نے فرمایا: ہاں حلال تو ہے ،لیکن تاجر لوگ قسم کھاتے ہیں گنہگار ہوتے ہیں اور باتیں کرتے ہیں اور جھوٹ بولتے ہیں( رواہ احمد باسنادجید و الحاکم و اللفظ لہ وقال صحیح الاسناد)

حضرت حارث رضی اللہ عنہ فرماتے ہیں کہ حضور اقدسﷺ کو دو جمروں کے درمیان یہ فرماتے ہوئے میں نے سنا کہ جس کسی نے اپنے بھائی کا مال جھوٹی قسم کے ذریعہ حاصل کرلیا وہ اپنا ٹھکانا دوزخ میں بنالے۔ اس کے بعد دو یا تین مرتبہ فرمایا: جو حاضر ہیں غائبوں کو پہنچادیں(رواہ احمد و الحاکم کمافی الترغیب)

ایک روایت میں ہے کہ جھوٹی قسم آبادیوں کو کھنڈربنا کر چھوڑ دیتی ہے( الترغیب) حضرت ابو ہریرہ رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ حضوراقدسﷺ نے ارشاد فرمایا: قسم سو دا تو بکوادیتی ہے( اور ) کمائی کی برکت کو ختم کردیتی ہے( بخاری و مسلم و ابودائود کمافی الترغیب)

جس طرح اپنا مال بیچنے کے لیے یا کسی کا کوئی حق مارنے کے لیے جھوٹی قسم کھانا حرام ہے اسی طرح کسی دوسرے کو کسی کا مال ناحق دلانے کے لیے یا مقدمہ میں جتانے کے لیے جھوٹی گواہی دینا حرام ہے، بڑے بڑے گناہوں کی فہرست میں بخاری ومسلم کی بعض روایت میں شہادۃ الزور کا لفظ آیا ہے جھوٹی گواہی دینا بھی سخت گناہ ہے، بہت سے لوگ کسی کی دوستی میں یا رشتہ داری کے تعلقات کی وجہ سے جھوٹی گواہی دے دیتے ہیں جھوٹی گواہی خود بہت بڑا گناہ ہے پھر اس کے ساتھ حاکم قسم بھی کہلواتا ہے جو جھوٹی ہوتی ہے اس لیے گناہ دوگنا ہوتا ہے اور حرام پر حرام ہوتا چلا جاتا ہے، تعجب ہے کہ لوگ دنیا کے تعلقات اور رشتہ داری کو دیکھتے ہیں اور آخرت کے عذاب کی طرف دھیان نہیں دیتے،بہت سے لوگوں نے تو جھوٹی گواہی کو پیشہ ہی بنا رکھا ہے پولیس سے اور وکیلوں سے جوڑ رکھتے ہیں اور روزانہ کورٹ کچہری میں پہنچ جاتے ہیں، پولیس اور وکیل الفاظ رٹا دیتے ہیں اور اسی وقت نقد گواہی دے کر نقددام لے آتے ہیں، ان کا یہ پیشہ حرام ہے اور آمدنی بھی حرام ہے، حرام کے ذریعہ حرام کماتے ہیں اس میں بڑے بڑے نماز ی تک مبتلا ہیں۔

حضور اقدسﷺ ایک مرتبہ فجر کی نماز پڑھ کر کھڑے ہوئے اور ارشاد فرمایا: جھوٹی گواہی اللہ کے ساتھ شرک کرنے کے برابر قرار دی گئی ہے، اس کو تین بار فرمایا، پھر آیت تلاوت فرمائی:

ترجمہ:سوبچتے رہو بتوں کی گندگی سے اور بچتے رہو جھوٹی بات سے‘‘( مشکوٰۃ: ص ۳۲۸)

قرآن مجید میں شرک سے بچنے کا اور جھوٹی بات سے بچنے کا حکم ایک ساتھ ایک جگہ بیان فرمایا ہے اس سے جھوٹی گواہی کی مذمت اور قباحت ظاہر ہے۔

 فائدہ:غیر اللہ کی قسم کھانا شرک ہے اگر چہ سچی کھائی، حضرت ابن عمر رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ حضور اقدسﷺ نے فرمایا: جس نے اللہ کے علاوہ کسی کی قسم کھائی اس نے شرک کیا۔( ترمذی)

بہت سی عورتیں غیر اللہ کی قسم کھا جاتی ہیں اور یہ بھی کہتی رہتی ہیں کہ تیر یسر کی قسم،دودھ کی قسم ،پوت کی قسم، دھن دولت کی قسم،باپ کی قسم ،یہ سب شرک ہے اول تو جہاں تک ممکن ہو قسم کھائے ہی نہیں، اگر کسی موقع پر سچی قسم کھانی پڑ جائے تو صرف اللہ کی قسم کھائے۔

گانا گانے کی مذمت اور حرمت

حضرت ابوہریرہ رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ حضور اقدسﷺ نے ارشاد فرمایا: البتہ انسان کا باطن ( پیٹ وغیرہ) پیپ سے بھر جائے جس سے اس کے معدہ وغیرہ کو خراب کرکے رکھ دے، تو یہ اس سے بہتر ہے کہ اس کا باطن شعروں سے بھر جائے۔(مشکوٰۃ المصابیح :ص ۴۰۹ ازبخاری و مسلم)

اس حدیث میں شعر پڑھنے کی مذمت فرمائی ہے اور توضیح اس کی یہ ہے کہ اشعار معنی کے اعتبار سے اچھے بھی ہوتے ہیں اور برے بھی ہوتے ہیں، بر ے شعر پڑھنے کی اجازت نہیں ہے، جن شعروں میں جھوٹ ہو، جھوٹی تعریف ہو، کسی کی مذمت یا غیبت ہو، جہالت و جاہلیت کی حمایت ہو، کفر اور شرک کے مضامین ہوں ایسے اشعار کہنے، پڑھنے لکھنے سننے میں گنا ہ ہونا ظاہر ہے اور عموماً ایسے اشعار سے نفس کو مزہ آتا ہے، پھر ان کے ساتھ ساز سارنگی باجہ گا جا بھی ہو تو گناہ دوگنا اور دوہرا ہوجاتا ہے اور جو اشعار اچھے ہوں ان کو پڑھنا ،زبان پر لانا درست ہے لیکن ساز، سارنگی اور باجے گاجے اور ہارمونیم اور ڈھول کے ساتھ ان کا پڑھنابھی گناہ ہے اور یہ چیزیں اگر نہ ہوں تب بھی عورتوں کو بلند آواز سے پڑھنا درست نہیں ہے۔

٭…٭…٭

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor