Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

طب نبویﷺ سے علاج ۔ 521

طب نبویﷺ سے علاج

(شمارہ 521)

نیزحضرت ابو بکرصدیق رضی اللہ عنہ کے بارہ میں منقول ہے کہ ان سے عرض کیا گیا کہ کیا ہم آپ ﷺکے لیے کوئی طبیب یا معالج بلادیں؟ تو انہوں نے فرمایا کہ طبیب نے مجھے دیکھ لیا ہے، پوچھنے والے نے پوچھا کہ اس نے پھر کیاکہا ہے؟ ابو بکر صدیق رضی اللہ عنہ نے فرمایا کہ اس نے کہا کہ میں جو چاہتا ہوں کرتا ہوں۔

 اسی طرح ابو الدرداء رضی اللہ عنہ سے کسی نے کہا کہ آپ کو کیا شکایت ہے؟ انہوں نے کہا کہ اپنے گناہوں کی :پوچھا گیا کہ کس چیز کی خواہش ہے؟ کہا کہ اپنے رب کی رحمت کی کسی نے کہا کہ کوئی طبیب بلالائیں؟ کہا کہ طبیب کی طب اور دوامیرے مرض کو دور نہیں کر سکتی۔

مؤلف کہتے ہیں کہ’’توکل‘‘خدا پردل کے اعتماد کرنے کانام ہے اور یہ بات اسباب کے منافی نہیں ہے یعنی اسباب اختیار کرنے کے خلاف نہیں ہے بلکہ سبب اختیار کرنا متوکل کے لیے لازم ہے۔ اس لیے کہ ماہر طبیب موزوں نسخہ تجویز کرے گا پھر اس کی کامیابی کے لیے اللہ پر ہی بھروسہ کرے گا۔ جیسے کا شتکار ہل چلاتا ہے، بیج بوتا ہے پھر اس کی نشوونما اور بارش کے لیے اللہ پر توکل کرتا ہے۔

اللہ تعالیٰ فرماتے ہیں:’’خذوا حذر کم‘‘اپنا بچائو کرو۔(النسائ:۷۱)

نیز حضور اکرمﷺ کا ارشاد گرامی ہے کہ’’اونٹ کو باندھ لو، پھر توکل کرو۔‘‘

نیز ارشاد فرمایا:’’ دروازے بند کردیا کرو۔‘‘

 ’’نیزخود سرور دوعالمﷺ غارثور میں تین دن تک روپوش رہے۔‘‘

علاوہ ازیں ایسا بھی ہوتاہے کہ بیماری پرانی ہوتی ہے اور اس کی دواغیر یقینی ہوتی ہے کہ کبھی نفع دیتی ہے اور کبھی نہیں دیتی۔

 نیز آنحضرتﷺ کا فرمان ہے کہ’’ جو شخص خود کو زہردے کر مار ڈالے گا (قیامت کے روز) اس کے ہاتھ اس کا زہرہوگا جسے وہ آتش دوزخ میں پئے گا۔(متفق علیہ)

اطباء سے رجوع کرنا:

حضرت جابررضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ انہوں نے فرمایا کہ’’ رسول اللہﷺ نے ابی بن کعبؓ کے پاس ایک طبیب کو بھیجا جس نے ان کے جسم کی رگ کو کاٹ کر اسے داغ دیا۔‘‘( مسلم)

 ٭…٭…٭

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor