Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

طب نبویﷺ سے علاج ۔ 566

طب نبویﷺ سے علاج

(شمارہ 566)

آنحضورﷺ سے مروی ہے کہ جب کسی کو نظر بند کا خوف ہو تو یہ پڑھ لے(اَللّٰھُمَّ بَارِکْ فِیْہٖ وَلَاتَضُرُّہُ) ابو سعید رضی اللہ عنہ کہتے ہیں کہ:’’رسول اللہﷺ جنات اور انسانوں کی نظر بد سے خدا کی پناہ مانگتے تھے۔‘‘

مذکورہ حدیث میں لفظ’’سفعۃ‘‘ چہرہ پرسیاہ نشان کو کہتے ہیں، بعض کہتے ہیں کہ چہرے پرزردی کے نشان کو کہتے ہیں۔ ابن قتیبہؒ کہتے ہیں کہ’’سفعۃ‘‘ اصل میں چہرے کے خلاف رنگ کا نام ہے۔ اصمعی ؒ کہتے ہیں کہ’’سفعۃ‘‘ سرخی مائل سیاہی رنگ کو کہتے ہیں۔ ابن خالویہ رحمہ اللہ کہتے ہیں کہ’’سفعۃ‘‘ جنون اور دیوانگی کو کہتے ہیں اور کتاب العین میں ہے کہ ’’سفعۃ‘‘سیاہی اور چہرے کے تغیر کا نام ہے۔

 حضرت عائشہ رضی اللہ عنہا فرماتی ہیں کہ:رسول اللہﷺ نے نظر بد کا دم کرنے کی اجازت دی ہے۔‘‘(بخاری ومسلم)

حضرت عمران بن حصین رضی اللہ عنہ سے مرفوعاً مروی ہے کہ:’’جھاڑ پھونک نظر بد اور زہریلے جانور کے ڈسنے میں ہی جائز ہے۔‘‘(بخاری )حدیث میں مذکور لفظ(الحمۃ) زہریلی چیز کے زہر کو کہتے ہیں اصل میں بچھو اور بھڑکی کی سوئی کو’’حمۃ‘ کہتے ہیں۔

 آنحضورﷺ کی حدیث صحیح ہے کہ:’’رسول اللہﷺ نے ایک آدمی کو کسی درد تکلیف کی وجہ سے دم کیا تھا۔‘‘

حضرت انس رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ نبی کریمﷺ نے نظر بد ،زہریلی چیز کے ڈسنے اور غلہ(ایک مرض) میں دم کرنے کی رخصت دی ہے۔‘‘’’سفعۃ‘‘ جسم میں جو پھوڑے نکل آتے ہیں اسے کہتے ہیں۔ بعض حکماء کا خیال ہے کہ نظر لگانے والے کی آنکھوں سے ایک قوت سمیہ سی نکلتی ہے جو نظر زدہ شخص کو لگ کر نقصان پہنچاتی ہے۔

 کہتے ہیں کہ سانپ کی ایک قسم ایسی ہے کہ جب اس کی نظر کسی انسان پر پڑجائے تو انسان ہلاک ہوجاتا ہے۔ سہل بن خیفؒ کی حدیث میں نظر لگانے والے کو وضو کرنے کا حکم دیا گیا ہے جس کا پانی نظر زدہ شخص استعما ل کرتا ہے ، یعنی حضورﷺ نے اسے وضو کرنے کا حکم دیا اور پھر وہ پانی نظر زدہ شخص پر انڈیل دیا ہے۔( کمارواہ مالک)

 ٭…٭…٭

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor