Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

الادب والادیب ۔ 677

الادب والادیب

(شمارہ 677)

طوفان سے کھیلے ہیں تو موجوں میں پلے ہیں

تب گوہر شہوار کے سانچے میں ڈھلے ہیں

ہر بزم درخشاں رہی تاباں رہی ہم سے

ہر بزم میں ہم شمع کی صورت سے جلے ہیں

کیا کیا نہ ہوئی ان کے تصور کی عنایت

گلزار میں جب پھول کھلے ہیں تو کھلے ہیں

میخوار ہیں لیکن کبھی پی کر نہیں بہکے

میخانہ سے آئے تو ترے در کو چلے ہیں

آجائو کہ ہے دل کی طرح آنکھ بھی خالی

پلکوں پہ جو آنسو تھے وہ اب سوکھ چلے ہیں

تھی گرمیٔ بازار محبت مرے دم سے

دنیا نے مجھے کھو کے بہت ہاتھ ملے ہیں

کیفیؔ مرے ہاتھوں میں ہیں وہ دست نگاریں

آفاق کے اب جاہ وحشم پائوں تلے ہیں

(ہمشیرہ باہرآفریدی شہیدؒ)

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor