Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

الادب والادیب ۔ 620

الادب والادیب

(شمارہ 620)

سینے کی آگ رخ پہ نمایاں کئے ہوئے

بیٹھا ہوں اپنی تیغ کو عریاں کئے ہوئے

 پھر دل میں آرزو ہے کہ ٹکرائوں کفر سے

مدت ہوئی ہے درد کا درماں کئے ہوئے

سوئے محاذ جانے سے روکے ہے مصلحت

کب تک رہوں میں خود کو پشیماں کئے ہوئے

 دل میں لگی ہے آگ مگر ہے دھواں دھواں

آتش کدئہ دہر کو حیراں کئے ہوئے

اب سوچنے کا وقت نہیں ہے اُٹھو اُٹھو

امن واماں کا دہرمیں ساماں کئے ہوئے

مصروف اہل حق ہیں جہادی محاذ پر

 تیغوں کے درمیاں رگ جاں کئے ہوئے

 اے دوست! الوداع کہہ چلا میں سوئے محاذ

ایمان کے چراغ فروزاں کئے ہوئے

اک پل بھی زندگی کا بھروسہ نہیں مگر

 بیٹھے ہیں لوگ سال کا ساماں کئے ہوئے

حوریں فلک سے آتی ہیں لینے شہید کو

 چہرے حیا سے لعل بد خشاں کئے ہوئے

(ہمشیرہ بابر آفریدی شہیدؒ)

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor