Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

الادب والادیب ۔ 624

الادب والادیب

(شمارہ 624)

دیکھنا اپنا نشیمن کس قدر دُشوار ہے

روزنِ زنداں سے آگے پھر وہی دیوار ہے

جواندھیرے کو ضیا کہتا نہیں اُس کے لئے

ٹکٹکی ہے، بید ہے اور بے تحاشہ مار ہے

یہ بہیمانہ تشدد اور یہ گالی گلوچ

زندگی زندانیوں پر کس قدردشوار ہے

عید کے دن بھی جکڑنا جسم کو زنجیر سے

عید کے دن بھی تشدد کا گرم بازار ہے

پاؤں زخمی ہوگئے ہیں بیڑیوں کے بوجھ سے

صبح کرنا شام کا، دشوار سے دشوار ہے

لب پہ تالے ڈالنے والوں کو بتلادے کوئی

خون کا بہنا بدن سے ظلم کا اِظہار ہے

جس کا ایماں عرش کے تاروں سے ہوجائے بلند

آتشِ نمرود بھی اس کے لیے گل زار ہے

کوئی مانے یا نہ مانے اے محمدﷺ کے غلام

کل بھی تو جی دار تھا اور آج بھی جی دار ہے

(ہمشیرہ باہرآفریدی شہیدؒ)

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor