Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

امریکی این جی او پر پابندی (قلم تلوار۔نوید مسعود ہاشمی)

Qalam Talwar 500 - Naveed Masood Hashmi - Ameriki NGOs per pabandi

امریکی این جی او پر پابندی

قلم تلوار...قاری نوید مسعود ہاشمی (شمارہ 500)

وزارت داخلہ نے ایک ملک دشمن امریکی این جی او پر پابندی عائد کیا کی۔۔۔ ایسے لگا کہ جیسے انجانے میں امریکہ کی دُم پر پاؤں رکھ دیا ہو؟۔۔۔ بہرحال اب جو ہو سو ہو۔۔۔ مگر ’’یہودی چلڈرن‘‘ نامی این جی او پر لگنے والی پابندی نے ہمارے ان خدشات پر مہر تصدیق ثبت کر دی کہ جن خدشات کا اظہار ہم گزشتہ کئی برسوں سے انہیں کالموں میں کرتے چلے آرہے تھے۔۔۔’’القلم‘‘ کے قارئین اس بات سے بخوبی آگاہ ہیں کہ اس خاکسار

نے اپنے کالموں میں ایسی این جی اوز کو ہمیشہ’’حقوق حیوانات‘‘ کی این جی اوز لکھا۔۔۔ اورپاکستانی قوم کو یہ بتانے کی کوشش کی کہ ڈالر خور این جی اوز پاکستان کو اسلام کے راستے سے ہٹا کر شیطان کے راستے پر چلانے کیلئے یہود و نصاریٰ کے ایجنڈے کو آگے بڑھانے کیلئے معرضِ وجود میں لائی گئی ہیں۔۔۔ کہنے کی حد تک این جی او’’نان گورنمنٹل آرگنائزیشن‘‘ کا مخفف ہے۔۔۔ جسے اردو میں غیر سرکاری رضا کار تنظیم کہا جاتا ہے،عوام کی

خدمت اور مدد کے نام پر غیر ملکی فنڈز اور مقامی میڈیا کے بل بوتے پر پاکستان کویرغمال بنانے والی اس قسم کی این جی اوز اپنے آپ کو اسلام آباد کے حکمرانوں سے بھی۔۔۔ زیادہ طاقتور سمجھتی ہیں۔۔۔ تو اس کی اصل وجہ۔۔۔ مختلف سیاسی پارٹیوں حتیٰ کہ پارلیمنٹ اور سینٹ میں بھی موجود این جی اوز مارکہ منبران اور وزراء ہوتے ہیں۔۔۔

 اسلام دشمن اور پاکستان دشمن این جی اوز کو پاکستان میں پنجے گاڑنے کا موقع جمہوری حکومتیں ہوں یا ڈکٹیٹروں کی حکومتیں۔۔۔ ان دونوں ادوار میں جان بوجھ کر دیا گیا۔۔۔یہ جانتے ہوئے بھی کہ بہت سی این جی اوز ایسی بھی ہیں کہ جو امریکہ، اسرائیل اور بھارت کے مفادات کی خاطر۔۔۔ پاکستان کی بنیادوں پر حملہ آور ہونے کی کوششیں کرتی ہیں۔۔۔ ان ملک دشمن این جی اوز اور ان کے خرکاروں کو نہ صرف اسلام آباد میںموجود طاقت کے

 مراکز تک رسائی حاصل رہی۔۔۔ بلکہ’’میڈیا‘‘ بھی ایسے گندے عناصر کے ہی زیر تسلط رہا۔۔۔ ان این جی اوز کی کوشش رہی کہ پاکستان میں اسلامی اقدار کو فروغ حاصل نہ ہو۔۔۔

 عورتوں کی آزادی کے نام پر۔۔۔ ان این جی اوز کے سیکولر خرکاروں نے۔۔۔ پاکستان کی عزت مند اور باپردہ خواتین کو’’ٹارگٹ‘‘ بنانے سے بھی دریغ نہ کیا۔۔۔ اگر کوئی مرجائے۔۔۔ تواس کی موت کی جگہ پر بجائے فاتحہ خوانی کے۔۔۔ موم بتیاں جلانا، شمعیں روشن کرنا۔۔۔ یہ سب کیا ہے؟ مسلمانوں کو مذہب اسلام سے دور کرنے کی نئی نئی سازشیں کرنے میں مصروف یہودی چلڈرن نامی امریکی این جی او گزشتہ30سالوں سے۔۔۔ پاکستان

 کی سرزمین پر رہتے ہوئے۔۔۔ پاکستان کے مفادات کے خلاف ہی سرگرم عمل تھی۔۔۔ اس این جی او کے ملازمین اور بعض عہدیداران کا امریکی سی آئی اے سے رابطہ کرنا نہایت آسان تھا۔۔۔ شہید اسامہ بن لادنؓ کی مخبری کرنے ولا’’غدار‘‘ ڈاکٹر شکیل آفریدی اسی این جی او کا خرکار تھا۔۔۔ ایک رپورٹ کے مطابق’’یہودی چلڈرن‘‘ افغان سرحد سے متصل خیبر پختون خوا کے علاقوں کے علاوہ سندھ اور بلوچستان کے شورش زدہ علاقوں

 میں متحرک تھی۔۔۔

سوال یہ ہے کہ۔۔۔ یہ امریکی این جی او۔۔۔ اس کے غیر ملکی اور لوکل ہرکارے شورش زدہ علاقوں میں کیا کرنے جاتے تھے؟ سچی بات ہے کہ رسوا کن ڈکٹیٹر پرویز مشرف کے تاریک دور میں۔۔۔ اس ملک و قوم کو جتنے نقصانات اٹھانے پڑے ان میں ایک بڑا نقصان یہ بھی تھا کہ۔۔۔ اس کے دور میں امریکی سی آئی اے اور این بی آئی کے ایجنٹوں کو پاکستان میں کھل کر کام کرنے کی اجازت دی گئی۔۔۔ پیپلز پارٹی کا پانچ سالہ دور

 حکومت بھی۔۔۔ اس حوالے سے انتہائی تباہ کن ثابت ہوا۔۔۔ آصف علی زرداری کے قریبی ساتھی بدنام زمانہ۔۔۔ حسین حقانی۔۔۔ کہ جو امریکہ میں پاکستان کا سفیر بھی تھا۔۔۔ نے یوسف رضا گیلانی کے ’’عبدِرحمان بابا‘‘ کے ساتھ مل کر سی آئی اے کے ہزاروں اہلکاروں کو۔۔۔ ویزے جاری کئے کہ جو سرزمین پاک پر پہنچ کر غائب ہو گئے۔۔۔ جس کی وجہ سے نہ صرف پاکستان عدم استحکام سے دوچار ہوا۔۔۔بلکہ پاکستانی قوم

 بھی عدم تحفظ سے دوچار ہوئی۔۔۔

وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کہتے ہیں کہ’’ کسی بھی این جی او کو ملک کے مفادات، ثقافت اور اقدار کے خلاف کام کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔۔۔ پاکستان کے مفادات کے خلاف کرنے والی مقامی اورغیر ملکی این جی اوز کے خلاف بھرپور کارروائی کریں گے۔۔۔ انہوں نے کہا کہ این جی اوز کے حوالے سے گزشتہ کئی برسوں سے پاکستان میں مادر پدر آزاد پالیسی چل

 رہی تھی۔۔۔ سالہا سال سے ۔۔۔ ہماری انٹیلی جنس ایجنسیوں کی رپورٹوں پر۔۔۔ کوئی کارروائی نہیں ہو رہی تھی۔۔۔ لیکن اب این جی اوز کو مادر پدر آزادی نہیں ملے گی‘‘۔۔۔ وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کے منہ میں گھی شکر۔۔۔ اللہ کرے وہ اپنے نیک ارادوں میں کامیاب ہوں۔۔۔ لیکن ان کی خدمت میں گزارش ہے کہ وہ اس بات کو بھی پیش نظر رکھیں کہ یہ غریب اور دینی مدرسے

 نہیں۔۔۔ بلکہ ڈالر زدہ این جی اوز ہیں۔۔۔ کہ جن کے پیچھے، امریکہ، برطانیہ، اسرائیل اور بھارت کھڑے ہیں۔۔۔ باخبر ذرائع اس بات کی خبر دے رہیں کہ یہودی چلڈرن نامی این جی او نے’’دی چلڈرن فرسٹ‘‘ اور یو ایس ایڈ نے’’دی کری ایٹو‘‘ کے نئے ناموں سے کام بھی شروع کر دیا ہے۔۔۔ ’’یہودی چلڈرن‘‘ کے دفاتر کو بند کرنا۔۔۔ موجودہ حکومت کا

 یقینا ایک بڑا کارنامہ ہے۔۔۔ لیکن’’دی چلڈرن فرسٹ‘‘ کے نام کو کالعدم قرار دینا۔۔۔ اور اس کے دفاتر سیل کرنے کے ساتھ ساتھ۔۔۔ اس کے ہرکاروں کو گرفتار کے کر جیلوں میں بند کرنا بھی ضروری ہے۔۔۔

امریکی سفیر کو دفتر خارجہ میں بلا کر پوچھا جائے کہ۔۔ یہودی چلڈرن نامی جس این جی او کی ملک دشمن سرگرمیوں کی وجہ سے۔۔۔ اس پر پابندی عائد کی گئی۔۔۔ اس کی حمایت میں امریکی حکومت نے کس خوشی میں بیانات جاری کئے؟ کیا’’یہودی چلڈرن‘‘ کے نام سے کام کرنے والی این جی او کی سرپرستی

 امریکی حکومت کر رہی ہے؟ اگر ایسا ہی ہے تو پھر امریکی حکمرانوں کی پاکستان دشمنی ہر شک و شبہہ سے پاک سمجھی جائے گی۔۔

پاکستان کو مذہب اسلام، اسلامی ثقافت اور اسلامی تہذیب و تمدن کی دشمن این جی اوز کی جنت سمجھا جاتا ہے۔۔۔ ان این جی اوز اور ان کے ڈالر خور خرکاروں نے غیر ملکی فنڈز لے کر پاکستانی نوجوانوں کے اخلاق و کردار کو بگاڑنے میں اہم

 کردار ادا کیا۔۔۔ انہیں این جی اوز نے بگڑے ہوئے میڈیا پنڈتوں کے ساتھ مل کر۔۔۔ پاکستان میں بے حیائی، فحاشی و عریانی کو پروان چڑھایا۔۔۔ الرحمت ٹرسٹ، سمیت متعدد ایسی این جی اوز بھی ہیں کہ جنہوں نے۔۔۔خالصتاً۔۔۔ عوام اورپاکستان کی خدمت پر توجہ مرکوز رکھی۔۔۔ لیکن اکثر غیر ملکی ڈالر خور این جی اوز وہ ہیں کہ جنہوں نے گستاخ رسول کے حق میں مرتد کی شرعی سزا، مدارس، مساجد، جہاد اور شرعی پردے کے خلاف کمپین چلا کر۔۔۔ یہود ونصاریٰ کے ایجنڈے کی تکمیل کرنے کی کوشش کی، ملک دشمن این جی او یہودی چلڈری کے دفاتر کو سیل کرکے حکومت نے ۔۔۔پاکستانی قوم کو ایک بڑی خوشخبری دی ہے۔۔۔

٭…٭…٭

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor