Bismillah

694


۱۰رمضان المبارک۱۴۴۰ھ

یہ سب کیا ہے؟ (قلم تلوار۔نوید مسعود ہاشمی)

Qalam Talwar 502 - Naveed Masood Hashmi - Ye Sab Kia Hay

یہ سب کیا ہے؟

قلم تلوار...قاری نوید مسعود ہاشمی (شمارہ 502)

کیا’’پیر مغاں‘‘ الطاف حسین متحدہ قومی موومنٹ کو۔۔۔ بھارت کی مالی اور عسکری مدد کے سہارے چلاتے رہے؟ ’’سنی تحریک‘‘کہ جس کی قیادت ذہنی اور فکری طور پر فرقہ واریت یوں اُگلتی ہے کہ جیسے۔۔۔ خراب موسم میں گٹر اُبلتے ہیں۔۔۔’’دہشت گردی‘‘ بھتہ خوری اور ٹارگٹ کلنگ کے خلاف۔۔۔بیانات دینے میں جن کا کوئی ثانی نہیں۔۔۔علمائِ حق کے خلاف گز گز بھر لمبی زبانیں نکالنا۔۔۔۔ جنہوںنے اپنا پیشہ بنا لیا ہے۔۔۔ سنی تحریک کے مرکز معین پلازہ سے پکڑے جانے والے ٹارگٹ کلرز، بھتہ خوروں، قبضہ مافیا اوردیگر سنگین جرائم میں ملوث11ملزمان کی جو تفصیلات جاری کی گئی ہیں۔۔۔ انسان ان تفصیلات کو پڑھ کر دم بخود رہ جاتا ہے۔۔۔۔

اور یہ سوچنے پر مجبور ہوجاتا ہے کہ یہاں آوے کا آوا ہی بگڑا ہوا ہے۔۔۔ اسلام، مذہب اورمسلک جیسے پیارے ناموں کی آڑ میں بھی بعض عاقبت نااندیش دہشت گردی اور لوٹ مار کا بازار گرم کئے ہوئے ہیں۔۔۔

ایم کیو ایم پر بھارت سے مالی اور عسکری مددلینے کا الزام۔۔۔ کسی مولوی، مدرسے یا جہادی نے نہیں لگایا۔۔۔ بلکہ بھتہ خوری، ٹارگٹ کلنگ، اغواء اور قتل و قتال کے سنگین الزامات کے بعد۔۔۔ اب بھارت سے مالی اور عسکری مدد لینے کا الزام برطانیہ کے نشریاتی ادارے بی بی سی کی طرف سے سامنے آیا۔۔۔ جاننے والے جانتے ہیں کہ الطاف حسین اور برطانیہ کی آپس میں خوب یاری تھی۔۔۔ برطانیہ’’پیر مغاں‘‘ کو گود لے کر یوں پرورش کر رہا تھا۔۔۔ کہ جسے دیکھ کر حربیار مری جیسے شہزادے بھی دانتوں کے نیچے انگلیاں دابنے پر مجبور ہو جاتے۔۔۔۔ گزشتہ30سالوں سے کراچی میں بے گناہ انسانوں کا خون تو بہہ ہی رہا تھا۔۔۔ مگر اہل کراچی اور پاکستان کو۔۔۔ بے تحاشہ لوٹ مارکے ذریعے اربوں روپے سے بھی محروم کر دیا گیا۔۔۔

’’پیر مغاں‘‘ اور برطانیہ کی آپسی محبت چھپائے نہیں چھپتی تھی۔۔۔

یہ بات بھی ریکارڈ کا حصہ ہے کہ ایم کیو ایم سیکولر شدت پسندی کی جن انتہاؤں کو چھو رہی ہے۔۔۔ اس سے آگے کنواں ہے یا کھائی۔۔۔اور برطانیہ پاکستان میں سیکولر شدت پسندی کو جس طرح سے’’ہوا‘‘ دے رہا ہے۔۔۔ یہ راز بھی کسی سے پوشیدہ نہیں۔۔۔ مگر اس کے باوجود ایک برطانوی نشریاتی ادارے نے ۔۔۔سیکولر شدت پسند جماعت ایم کیو ایم پرپاکستان کے ازلی دشمن ملک بھارت سے مدد اورعسکری تربیت لینے کا جو الزام لگایا ہے۔۔۔ اس کی وجہ سے پوری قوم ہل کررہ گئی ہے۔۔۔

 الطاف حسین وہ شخص ہے کہ۔۔۔۔ جس نے اپنی’’کھڑکھڑاتی‘‘ تقریروں میں۔۔۔۔مذہب ہو، یا مسلک ۔۔۔ علماء ہوں یا مدارس۔۔۔ سب کو رگیدنا اپنا فرض جانا۔۔۔ حتیٰ کہ اسلام آباد کی لال مسجد کے امام اور خطیب سے اختلاف کو بنیاد بنا کر۔۔۔ اللہ کے گھر’’لال مسجد‘‘ کو آگ لگادینے جیسی خرافات بکنے سے بھی دریغ نہیں کیا۔۔۔

پھر لال مسجد کی کرامت بھی ملاحظہ کیجئے۔۔۔ 19 دسمبر کوموصوف نے لال مسجد کو ’’مسجد ضرار‘‘ (نعوذباللہ) قرار دیتے ہوئے اس مسجد کو آگ لگانے کی بات کی تھی۔۔۔اس بدترین اورخوفناک اعلان کوابھی سات ماہ پورے بھی نہیںہوئے۔۔۔’’لال مسجد‘‘ کے مالک و خالق نے ایم کیو ایم کے اَنگ اَنگ میں آگ بڑھکا ڈالی ہے ۔۔۔ ’’پیر مغاں‘‘ کی خودساختہ سلطنت نے بھی شعلے اُگلناشروع کر دیئے ہیں۔۔۔ کراچی سے لیکر لندن اور دہلی تک۔۔۔ ایک زلزلہ بپا ہے۔۔۔ کوئی الطاف حسین کو بتائے کہ۔۔۔خدا کے ہاں دیر ضرور ہے۔۔۔ اندھیر نہیں۔۔۔ علماء کا لہو، صلحاء کا لہو، خطباء کا لہو، تاجروں کا لہو۔۔۔بے گناہ شہریوں کا لہو۔۔۔ لال مسجد کی بددعا۔۔۔ ماؤں، بہنوں، بیٹیوں کے آنسورنگ لارہے ہیں۔۔۔

جو چپ رہے گی زبانِ خنجر

لہو پکارے گا آستیں کا

کیا شیطان یہ سمجھتا ہے کہ۔۔۔ وہ اپنے پجاریوں کے ذریعے۔۔۔ اسلحے اور طاقت کے زورپر اہل ایمان کو جھکالے گا؟ ہرگز نہیں۔۔۔ ہرگز نہیں۔۔۔ باطل کو ایک نہ ایک دن زوال آکے ہی رہے گا۔۔۔ اگر باطل کی طاقت اور جاہ و حشمت میں عزت اور عظمت ہوتی تو غرور کبھی اپنے سر پر’’چھتر‘‘ کا سکون محسوس نہ کرتا۔۔۔

اگر باطل کبھی حق والوں پر غالب آسکتا۔۔۔ تو فرعون کبھی دریائے نیل کی موجوں میں غرق نہ ہوتا۔۔۔عزت و عظمت صرف اور صرف’’حق‘‘ کے ساتھ جڑا رہنے میں ہے، 2004ء میں رسوائے زمانہ پرویز مشرف کے دور میں سنی تحریک کو۔۔۔واچ لسٹ میں شامل کرنے کا اعلان کیا گیا۔۔۔ پھر کراچی بدامنی کیس میں سپریم کورٹ میں حساس اداروں نے جو رپورٹ پیش کی تھی۔۔۔ اس میں تحریر تھاکہ سنی تحریک کا عسکری ونگ دہشت گردی، بدامنی، ٹارگٹ کلنگ اور بھتہ خوری میں ملوث ہے۔۔۔

سنی تحریک نہ صرف کراچی بلکہ راولپنڈی اسلام آباد میں بھی دوسرے مسالک کی مسجدوں پر قبضوں اور فرقہ وارانہ لڑائیوں میں ملوث چلی آرہی تھی۔۔۔ لیکن ان سب گھاتوں اور وارداتوں کے باوجود۔۔۔ نجانے وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی کا دورِبدہویا میاںنواز شریف کا دور۔۔۔ حکمرانوں کی آنکھوں میں سنی تحریک کی محبت کا موتیا کیوں اُترا رہا؟

تاآنکہ۔۔۔ رینجرز کے ترجمان کامندرجہ ذیل اعلامیہ اخبارات کی زینت بنا۔۔

’’رینجرز نے سنی تحریک کے مرکز معین پلازہ سے ٹارگٹ کلرز، بھتہ خوروں، قبضہ مافیا اور دیگر سنگین جرائم میں ملوث11ملزمان کی تفصیلات جاری کرتے ہوئے 23جون کو اپنے اعلامیہ میں کہا کہ محمد عالم عرف بابا ۔۔۔ 15قتل کی وارداتوں۔۔۔ مسلح تصادم، بھتہ وصولی ولینڈ مافیا میں۔۔۔ احمد جواد قادری عرف وجا14قتل کی وارداتوں، زبیر علی13قتل کی وارداتوں،محمد سلیمان عرف مرچی11قتل کی وارداتوں، محمد اکرم7قتل کی وارداتوں، شکیل عرف فوجی متعدد قتل ، بھتہ خوری اور اسٹریٹ کرائم کی وارداتوں میں ملوث ہیں۔ رینجرز کے مطابق، یہ ملزمان تنظیم کیلئے کھالیں چھیننے اور فطرہ جمع کرنے میں بھی ملوث رہے‘‘

افسوس صد افسوس مذہب اور مسلک کی آڑ میں بھی انسانوں کا لہو بہانے اور لوٹ مار کا بازار گرم کرنے والوں نے۔۔۔ دین کو بدنام کرنے میں کوئی کسر نہ چھوڑی۔۔۔

اللہ ہمارے ملک کی حفاظت فرمائے آمین۔

٭…٭…٭

رنگین صفحات کے مضامین

  • رنگ و نور ۔ سعدی کے قلم سے
  • Rangonoor English
  • Message Corner
  • رنگ و نور پشتو ترجمہ
  • کلمۂ حق ۔ مولانا محمد منصور احمد
  • السلام علیکم ۔ طلحہ السیف
  • قلم تلوار ۔ نوید مسعود ہاشمی
  • نقش جمال ۔ مدثر جمال تونسوی
  • سوچتا رہ گیا ۔ نورانی کے قلم سے

Alqalam Latest Epaper

Alqalam Latest Newspaper

Rangonoor Web Designing Copyrights Khabarnama Rangonoor